உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    CoWin: کوویکسین اور کووی شیلڈ کو ملی ہندوستانی مارکیٹ میں منظوری، لیکن شرائط بھی ہوں گے لاگو

    تصویر: @mansukhmandviya

    تصویر: @mansukhmandviya

    خبر رساں ایجنسی پی ٹی آئی نے ذرائع کے حوالے سے بتایا گیا ہے کہ شرائط کے تحت ان فرموں کو جاری کلینیکل ٹرائلز اور پروگرامی ترتیب کے لیے فراہم کی جانے والی ویکسینز کا ڈیٹا جمع کرانا ہوگا۔ وہیں حفاظتی ٹیکوں کے بعد ہونے والے منفی واقعات پر نظر رکھی جائے گی۔

    • Share this:
      ہندوستان کے ڈرگ ریگولیٹر نے جمعرات کو کچھ شرائط کے ساتھ بالغ آبادی میں استعمال کے لیے کووڈ 19 ویکسین کووی شیلڈ (Covishield) اور کوویکسین (Covaxin) کے لیے مارکیٹ کی منظوری دے دی ہے۔ یہ منظوری نئے ڈرگس اینڈ کلینیکل ٹرائلز رولز 2019 کے تحت دی گئی ہے۔ کووڈ-19 کی دو ویکسینوں کے لیے مارکیٹ کی منظوری کے بارے میں مطلع کرتے ہوئے مرکزی وزیر صحت ڈاکٹر منسکھ منڈاویہ نے جمعرات کو ٹویٹ کیا سینٹرل ڈرگ اسٹینڈرڈ کنٹرول آرگنائزیشن (CDSCO) نے اب کوویکسین اور کووی شیلڈ کے لیے محدود استعمال کی اجازت کو اپ گریڈ کر دیا ہے۔ بعض شرائط کے ساتھ ہنگامی حالات میں بالغ آبادی کے لیے اجازت دی گئی ہے۔

      خبر رساں ایجنسی پی ٹی آئی نے ذرائع کے حوالے سے بتایا گیا ہے کہ شرائط کے تحت ان فرموں کو جاری کلینیکل ٹرائلز اور پروگرامی ترتیب کے لیے فراہم کی جانے والی ویکسینز کا ڈیٹا جمع کرانا ہوگا۔ وہیں حفاظتی ٹیکوں کے بعد ہونے والے منفی واقعات پر نظر رکھی جائے گی۔

      وزیر صحت منسکھ منڈاویہ (Mansukh Mandaviya) نے ایک اور ٹویٹ میں کہا کہ شرائط میں CoWin پلیٹ فارم پر رجسٹریشن سمیت پروگرامی ترتیبات کی فراہمی اور چھ ماہ کی بنیاد پر حفاظتی ڈیٹا جمع کرنا جاری رکھنا شامل ہے۔ ان شرائط میں پروگرامی ترتیبات کی فراہمی شامل ہے جس میں CoWin پلیٹ فارم پر رجسٹریشن اور چھ ماہانہ بنیادوں پر حفاظتی ڈیٹا جمع کرنا جاری رکھنا شامل ہے۔


      یہ دونوں ویکسین دکانوں پر فروخت نہیں کی جائیں گی۔ مرکزی وزارت صحت کے ذرائع نے جمعرات کو بتایا کہ تاہم، نجی اسپتال اور کلینک عوام کو خوراک خرید سکتے ہیں اور ان کا انتظام کرسکتے ہیں۔ ذرائع نے بتایا کہ حکومت کی نیشنل ہیلتھ رجسٹری کے تحت رجسٹرڈ اور/یا نیشنل ایکریڈیٹیشن بورڈ فار ٹیسٹنگ اینڈ کیلیبریشن لیبارٹریز (NABL) سے منظور شدہ ہسپتالوں اور کلینکس کو ان ویکسینز کا ذخیرہ رکھنے کی اجازت ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ پرائیویٹ اسپتالز کے لیے اب ویکسین کا 25 فیصد کوٹہ نہیں رہے گا۔

      اس سے قبل حکومت نے نجی اسپتالز کو ملک میں تیار ہونے والی 25 فیصد ویکسین خریدنے کی اجازت دی تھی۔ ذرائع نے بتایا کہ سیرم انسٹی ٹیوٹ آف انڈیا (Serum Institute of India) کے ذریعہ تیار کردہ کووی شیلڈ اور بھارت بائیوٹیک (Bharat Biotech) کے ذریعہ تیار کردہ کوویکسین کو صرف اسپتالز اور کلینکز کے اسٹاک میں رکھا جائے گا۔

      انہوں نے کہا کہ زیر انتظام ویکسین کی تفصیلات Cowin پلیٹ فارم پر جمع کرانا ضروری ہے۔ کوویکسین اور کووی شیلڈ کو 3 جنوری کو ہنگامی استعمال کی اجازت (EUA) دی گئی۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: