ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

وبا کے اس دور میں تعلیم کی فراہمی ایک بڑا چیلنج، اسکولوں کے ذمہ داران کے ساتھ بچوں کے والدین بھی ہوں سنجیدہ

غریب اور درمیانی طبقے کے بچوں کے والدین کے لئے اس وبا کے دور میں اس آن لائن نظام سے مکمل طور پر فیض حاصل کر پانا بھی بڑا چیلنج ہے۔

  • Share this:
وبا کے اس دور میں تعلیم کی فراہمی ایک بڑا چیلنج، اسکولوں کے ذمہ داران کے ساتھ بچوں کے والدین بھی ہوں سنجیدہ
معروف ماہر تعلیم، سماجی کارکن و دانشور جگدیش گاندھی

لکھنئو۔ کورونا وبا کے اس عہد میں صرف زندگی کی رفتار ہی سست نہیں ہوئی ہے بلکہ زندگی کے تقاضے اور ضروریات بھی بدل گئے ہیں۔ “جان ہے تو جہان ہے “کے مصداق لوگوں کی زندگیوں کا تحفظ سب سے ضروری ہے اور جب بچوں کی زندگی کا معاملہ ہو تو لوگ اپنی زندگی سے زیادہ بچوں کے تحفظ کو ترجیح دیتے ہیں۔ معروف ماہر تعلیم، سماجی کارکن و دانشور جگدیش گاندھی کہتے ہیں کہ ہم نے  سی ایم ایس  کی سبھی شاخوں میں آن لائن کلاسز شروع کرکے اور اس نظام کو کامیاب بنا کر  پوری کوشش کی ہے کہ بچے گھروں پر محفوظ رہ کر علم کی دولت سے مالا مال ہوتے رہیں۔ اس کے لئے اسکول کی سطح پر نہ صرف جدید تکنیک استعمال کی جارہی ہے بلکہ ٹیچروں کو تربیت دے کر ایسا نظام قائم کرنے کی کوشش کی جارہی ہے کہ بچوں کو محسوس ہو کہ وہ اپنے ساتھیوں کے ساتھ کلاس میں بیٹھ کر تعلیم حاصل کر رہے ہیں۔


اس میں دو رائے نہیں کہ جگدیش گاندھی کی قیادت اور سربراہی میں چلائے جا رہے بیشتر تعلیمی اداروں میں یہ آن لائن نظام تعلیم کی فراہمی کو یقینی بنا رہاہے تاہم غریب اور درمیانی طبقے کے بچوں کے والدین کے لئے اس وبا کے دور میں اس نظام سے مکمل طور پر فیض حاصل کر پانا بھی بڑا چیلنج ہے۔ چونکہ اس کے لئے بچوں کو اسمارٹ موبائل فون اور لیپ ٹاپ وغیرہ کی ضرورت ہوتی ہے ، ساتھ ہی فیس میں تخفیف نہ ہونے اور حصول ِمعاش کے وسائل متاثر ہونے سے بڑی دشواریوں کا سامنا ہے۔ اس کے بارے میں کئی بچوں کے والدین نے جگدیش گاندھی سے اس ضمن میں بھی خصوصی غور وخوض کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔جگدیش گاندھی کہتے ہیں کہ ہم ہر سطح پر اساتذہ اور والدین کو ہر ممکن تعاون فراہم کرنے کی کوشش کر رہے ہیں لیکن اس باب میں لوگوں کو حکومت کی ان فلاحی اسکیموں سے بھی فائدہ اٹھانا چاہئے جو تعلیمی نظام کو جدید بنانے اور لوگوں کو امداد فراہم کرنے کے لیے چلائی جارہی ہیں۔


گاندھی کہتے ہیں کہ مصیبت کے اس دور میں سبھی لوگوں اور سبھی سرکاری اور نجی اداروں کو مل جل کر کام کرنے کی ضرورت ہے کیونکہ مشترکہ کوششوں سے ہی یہ اہم مسائل حل ہو سکتے ہیں۔


 
Published by: Nadeem Ahmad
First published: Jul 13, 2020 01:38 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading