ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

بی اے کی طالبہ کو یرغمال بناکر ہوٹل میں کیا دو لوگوں نے کیا یہ گھنونا کام، گرفتار

ہریانہ (Haryana) کے ریواڑی میں بی اے کجی طالبہ کی اجتماعی عصمت دری (Gangrape) کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ جاٹو سانا تھانے کی پولیس نے گینگ ریپ کے دونون ملزموں کو گرفتار(Arrest) کر لیا ہے۔

  • Share this:
بی اے کی طالبہ کو یرغمال بناکر ہوٹل میں کیا دو  لوگوں نے کیا یہ گھنونا کام، گرفتار
علامتی تصویر

ہریانہ (Haryana) کے ریواڑی میں بی اے کجی طالبہ کی اجتماعی عصمت دری (Gangrape) کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ جاٹو سانا تھانے کی پولیس نے گینگ ریپ کے دونون ملزموں کو گرفتار(Arrest) کر لیا ہے۔

جاٹو سانا تھانہ انتظامیہ نے بتایا کہ ماڈل ٹاؤن علاقے کی رہنے والی ایک لڑکی نے اپنی شکایت میں کہا کہ وہ اپنی خالہ کے پاس رہتی ہے اور یہاں کے ایک کالج میں بی اے کے پہلے سال کی طالبہ ہے۔ گزشتہ 5 جنوری جنوری کو دونوں ملزم اس کے گھر کے پاس آئے اور اسے اس کی خالہ کے گھر چھوڑنے کی بات کو لیکر اپنے ساتھ لے گئے۔ راستے میں ایک ہوٹل میں لے جاکر دونوں نے طالبہ کے ساتھ اس شرمناک حرکت کو انجام دیا۔ جاتے ۔جاتے دونون بدمعاشوں نے متاثرہ کو کسی کو اس واقعے کے بارے میں بتانے پر جان سے مارنے کی دھمکی دی۔

اس کے بعد 25 جنوری کے دن جب لڑکی کالج جارہی تھی تو راستے میں دونوں ملزموں نے اسے روک لیا اور بہلا۔پھسلاکر اپنے ساتھ ریواڑی لے آئے۔ ریواڑی بس اسٹاپ کے نزدیک ایک ہوٹل میں لے جاکر ملزم منوج نے اس کا ریپ کیا۔ واردات کو انجام دینے کے بعد ملزم لڑکی کو جاٹوسانا چھوڑ کر فرار ہوگئے۔

متاثرہ نے گھر پہنچ کر اپنی خالہ کو آپ بیتی بتائی۔ جس کے بعد وہ اسے لیکر تھانہ پولیس کے پاس پہنچی۔ پولیس نے متاثرہ لڑکی کی شکایت پر فوری کارروائی کرتے ہوئے مختلف دفعات کے تحت معاملہ درج کرکے دونوں ملزموں کو گرفتار کرلیا۔ پولیس نے دونوں ملزموں کو عدالت میں پیش کیا جہاں سے انہیں عدالتی حراست میں بھیج دیا گیا۔

First published: Jan 29, 2020 07:00 AM IST