உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    پلوامہ حملہ : سی آر پی ایف نے دی وارننگ ، سوشل میڈیا پر فرضی تصویریں شیئر کرنا پڑ سکتا ہے بھاری

    فائل فوٹو۔

    سی آر پی ایف نے اتوار کو ٹوئٹر پر جاری ایک مشورے میں کہا کہ پلوامہ دہشت گردی حملے میں شہید ہوئے جوانوں کی فرضی تصویریں سوشل میڈیا پر پھیلارہے ہیں۔ ایسی تصویروں کو شیئر یا پسند نہیں کیا جانا چاہئے۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:
      سی آر پی ایف نے پلوامہ دہشت گردی حملے کے سلسلے میں سوشل میڈیا میں چل رہی فرضی تصویروں کو شیئر نہ کرنے کی درخواست کی ہے اور کہا کہ کشمیری طالب علموں کے ساتھ بدسلوکی کی خبریں غلط ہیں۔
      سی آر پی ایف نے اتوار کو ٹوئٹر پر جاری ایک مشورے میں کہا کہ پلوامہ دہشت گردی حملے میں شہید ہوئے جوانوں کی فرضی تصویریں سوشل میڈیا پر پھیلارہے ہیں۔ ایسی تصویروں کو شیئر یا پسند نہیں کیا جانا چاہئے۔






      سی آر پی ایف نے کہا کہ ’’اس طرح کی بات سامنے آئی ہے کہ کچھ نفرت پھیلانے والے عناصر شہیدوں کے کٹے پھٹے جسموں کی فرضی تصویریں سوشل میڈیا پر پھیلانے کی کوششیں کررہے ہیں لیکن ہم متحد ہیں۔‘‘ مشورے میں کہا گیا ہے کہ ایسی تصویریں یا پوسٹ شیئر نہیں کی جانی چاہئے۔ ایسی تصویریں اور پوسٹ کی اطلاع ’ویب پرو ایٹ سی آر پی ایف ڈاٹ گو ڈاٹ ان‘ پر دی جاسکتی ہے۔
      First published: