உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    امیر خسرو تکونہ قبرستان پر ڈی ڈی اے کی قبضہ کی کوشش

    علی گڑھ ۔ نظام الدین کے امیر خسرو تکونہ قبرستان پر ڈی ڈی اے کے ذریعہ قبضہ کی کوشش کی گئی تاہم وقف بورڈ کی ٹیم اور مقامی باشندوں کی بروقت مداخلت سے چہار دیواری کی تعمیر کو رکوادیا گیا۔

    علی گڑھ ۔ نظام الدین کے امیر خسرو تکونہ قبرستان پر ڈی ڈی اے کے ذریعہ قبضہ کی کوشش کی گئی تاہم وقف بورڈ کی ٹیم اور مقامی باشندوں کی بروقت مداخلت سے چہار دیواری کی تعمیر کو رکوادیا گیا۔

    علی گڑھ ۔ نظام الدین کے امیر خسرو تکونہ قبرستان پر ڈی ڈی اے کے ذریعہ قبضہ کی کوشش کی گئی تاہم وقف بورڈ کی ٹیم اور مقامی باشندوں کی بروقت مداخلت سے چہار دیواری کی تعمیر کو رکوادیا گیا۔

    • ETV
    • Last Updated :
    • Share this:

      علی گڑھ ۔ نظام الدین کے امیر خسرو تکونہ قبرستان پر ڈی ڈی اے کے ذریعہ قبضہ کی کوشش کی گئی تاہم وقف بورڈ کی ٹیم اور مقامی باشندوں کی بروقت مداخلت سے چہار دیواری کی تعمیر کو رکوادیا گیا۔ وقف بورڈ کے مطابق نظام الدین کا تکونہ قبرستان 12ایکڑ 8بیگھہ آراضی خسرہ نمبر 226اور وقف گزٹ 1964کے تحت درج ہے ۔اسی آرا ضی پر ڈی ڈی اے اور وقف بورڈ کے لوگوں کے درمیان تنازع  ہے۔


      دراصل ڈی ڈی اے کی ٹیم دہلی ہائی کورٹ کے ایک حکم نامہ کو بنیاد  بنا کر اتوار کو نظام الدین پہنچی اور چہاردیواری کی تعمیر شروع کردی۔ خبر ملتے ہی وقف بورڈ اور مقامی باشندوں اور علماءکی ایک ٹیم موقع پر پہنچ گئی اور ڈی ڈی اے سے تعمیر روکنے کے لئے کہا جس کے بعد موقع پر پولیس بھی پہنچ گئی اور اس دوران ڈی ڈی اے کے افسران کے ساتھ وقف بورڈ کے لوگوں کی تکرارہوئی اور کام روک دیا گیا۔


      دراصل نظام الدین کے ایک باشندے کی جانب سے مفاد عامہ کی عرضی داخل کی گئی ہے جس میں کہا گیا کہ اس آراضی میں جو جھگیاں ہیں ان میں غیر قانونی سرگرمیاں ہوتی ہیں جن کو روکنے کا حکم دیا جائے ۔ ہائی کورٹ نے ڈی ڈی اے کو پارٹی بناکر حکم دیا کہ جھگیاں ہٹاکر آراضی خالی کرائی جائے اور چہار دیواری کرائی جائے ۔


      tikona


      معاملہ تھانہ میں طے ہوا ۔ مقامی لوگوں کاکہنا تھا کہ ڈ ی ڈی اے کی زمین نہیں ہے تو ڈی ڈی اے کیوں چہار دیواری کررہا ہے۔ وقف بورڈ خود اپنی چہار دیواری کرائے گا۔

      First published: