உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ملک کی 7 ریاستوں میں پی ایف آئی کے خلاف دوبارہ کارروائی، 270 افراد زیر حراست، فسادات کیلئے اکسانے کا الزام

    'پی ایف آئی کو بائیں بازو کی حکومت کی حمایت حاصل ہے"

    'پی ایف آئی کو بائیں بازو کی حکومت کی حمایت حاصل ہے"

    Popular Front of India: انٹیلی جنس ذرائع کے مطابق پی ایف آئی خلیجی ممالک میں تین فرنٹ آرگنائزیشن چلاتی ہے، جن میں انڈیا فریٹرنٹی فورم (IFF)، انڈین سوشل فورم (ISF) اور ریحان انڈین فاونڈیشن (RIF) شامل ہے۔ پی ایف آئی نے کیڈر کو مسلم مخالف تنظیموں اور افراد کو پرتشدد جواب دینے کی تربیت دی۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Delhi | Mumbai | Jammu | Hyderabad | Lucknow
    • Share this:
      انٹیلی جنس ذرائع نے سی این این نیوز 18 کو بتایا ہے کہ پاپولر فرنٹ آف انڈیا (PFI) کے خلاف منگل کے روز بڑے پیمانے پر کریک ڈاؤن کیا گیا، جس کے تحت سات ریاستوں میں 270 افراد کو احتیاطی حراست میں بھیجا گیا، اس کا مقصد بنیادی طور پر ان لوگوں کے خلاف کارروائی کرنا ہے، جو کہ ممکنہ طور پر فسادات کے مقصد سے بڑے پیمانے پر متحرک ہیں۔

      ذرائع نے بتایا کہ زیر حراست افراد کو ایگزیکٹو مجسٹریٹ کے سامنے پیش کیا جائے گا اور ان سے بانڈز بھرنے کو کہا جائے گا کہ وہ فسادات میں ملوث نہیں ہوں گے۔ ذرائع نے مزید کہا کہ انہیں آئندہ دو سے تین دنوں میں رہا کر دیا جائے گا۔ ذرائع نے بتایا کہ چھاپوں کے پہلے دور کے بعد پی ایف آئی فسادات اور فرقہ وارانہ کشیدگی کی منصوبہ بندی کر رہا تھا۔

      چھاپوں کے دوسرے راؤنڈ میں ریاستی پولیس فورس نے اتر پردیش میں 56، کرناٹک میں 74، آسام میں 23، دہلی میں 34، مہاراشٹرا میں 47، مدھیہ پردیش میں 21 اور گجرات میں 15 افراد کو حراست میں لیا، جن کی شناخت پہلے راؤنڈ کے چھاپوں بعد ہوئی۔ 22 ستمبر کو نیشنل انویسٹی گیشن ایجنسی (NIA) کی سربراہی میں ملٹی ایجنسی ٹیموں نے 15 ریاستوں میں پی ایف آئی کے 106 لیڈروں اور کارکنوں کو ملک میں دہشت گردانہ سرگرمیوں کی حمایت کرنے کے الزام میں گرفتار کیا۔

      این آئی اے پی ایف آئی سے جڑے 19 معاملات کی تحقیقات کر رہی ہے۔ اس دوران پولیس ٹیموں نے منگل کو اپنی متعلقہ ریاستوں میں دھاوا بول دیا۔ ان کے خلاف کریمنل پروسیجر کوڈ (سی آر پی سی) کی دفعہ 107 اور 151 کے تحت احتیاطی حراست کے مقدمات درج کیے گئے ہیں۔

      یہ بھی پڑھئے:


      سپریم کورٹ سے ادھو گروپ کو بڑا جھٹکا، اصلی شیوسینا کون؟ اب الیکشن کمیشن کر سکے گا فیصلہ


      انٹیلی جنس ذرائع کے مطابق پی ایف آئی خلیجی ممالک میں تین فرنٹ آرگنائزیشن چلاتی ہے، جن میں انڈیا فریٹرنٹی فورم (IFF)، انڈین سوشل فورم (ISF) اور ریحان انڈین فاونڈیشن (RIF) شامل ہے۔ پی ایف آئی نے کیڈر کو مسلم مخالف تنظیموں اور افراد کو پرتشدد جواب دینے کی تربیت دی۔

      یہ بھی پڑھیں: 

      Exclusive : پی ایف آئی پر بہت جلد پابندی لگانے والی ہے سرکار، سبھی تیاری پوری : ذرائع



      ایک گروہ بین الاقوامی ہمدردی حاصل کرنے کے لیے بڑے پیمانے پر متحرک ہونے میں شامل تھا اور قانونی مدد کے لیے کالیں کی گئیں۔ ذرائع نے بتایا کہ یہ گروپ سیاسی نظر آتے ہیں، لیکن ان کے دہشت گردانہ روابط ہیں اور وہ مشرقی دہلی جیسے فسادات کو دہرانا چاہتے ہیں۔ ذرائع نے بتایا کہ زیر حراست افراد کو ایگزیکٹو مجسٹریٹ کے سامنے پیش کیا جائے گا اور ان سے بانڈز بھرنے کو کہا جائے گا کہ وہ فسادات میں ملوث نہیں ہوں گے۔ ذرائع نے مزید کہا کہ انہیں آئندہ دو سے تین دنوں میں رہا کر دیا جائے گا۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: