உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Defence Acquisition: دفاعی شعبے میں خود انحصاری کی طرف ہندوستان کا بڑا قدم، 76,390 کروڑ کے ہتھیاروں کی خریداری کو منظوری

    Ministry Of Defence Approved Defence Purchases: وزیر دفاع راجناتھ سنگھ (Rajnath Singh) کی صدارت میں ہوئی اس میٹنگ میں ان ہتھیاروں اور فوجی ساز و سامان کی خریداری کی منظوری دی گئی۔

    Ministry Of Defence Approved Defence Purchases: وزیر دفاع راجناتھ سنگھ (Rajnath Singh) کی صدارت میں ہوئی اس میٹنگ میں ان ہتھیاروں اور فوجی ساز و سامان کی خریداری کی منظوری دی گئی۔

    Ministry Of Defence Approved Defence Purchases: وزیر دفاع راجناتھ سنگھ (Rajnath Singh) کی صدارت میں ہوئی اس میٹنگ میں ان ہتھیاروں اور فوجی ساز و سامان کی خریداری کی منظوری دی گئی۔

    • Share this:
      Ministry Of Defence Approved Defence Purchases: دفاعی شعبے (Defence Sector) میں 'خود کفیل ہندوستان' کی سمت میں ایک اہم قدم اٹھاتے ہوئے دفاعی حصول کونسل (Defense Acquisition Council) نے پیر کو 76 ہزار کروڑ کے ٹینک، ٹرک، جنگی جہاز اور ہوائی جہاز کے انجن خریدنے کی منظوری دی۔ وزیر دفاع راجناتھ سنگھ (Rajnath Singh) کی صدارت میں ہوئی اس میٹنگ میں ان ہتھیاروں اور فوجی ساز و سامان کی خریداری کی منظوری دی گئی۔

      وزارت دفاع کے مطابق پیر کو منعقدہ ڈیفنس ایکوزیشن کونسل (ڈی اے سی) کی میٹنگ میں آرمی، ایئر فورس، بحریہ اور کوسٹ گارڈ کے لیے 76,390 کروڑ کے خرید کیلئے (AON) کی خریداری کو منظوری دی گئی۔ AON کسی بھی دفاعی خریداری کے لیے ہونے والے ٹینڈر کا پہلا عمل ہے۔

      وزارت دفاع نے کن مصنوعات کی خرید کو دی ہے منظوری ؟

      ڈی اے سی یعنی ڈیفنس ایکوزیشن کونسل نے ان خریداریوں کو بائی انڈیا، بائی اینڈ میک انڈیا اور بائی انڈیا-آئی ڈی ڈی ایم یعنی دیسی ڈیزائن ڈیولپمنٹ اور مینوفیکچرنگ کے زمروں میں منظوری دی ہے۔ وزارت دفاع نے فوج کے لیے پل بچھانے والے ٹینک، پہیوں والی آرمرڈ فائٹنگ وہیکلز (اے ایف وی) جو اینٹی ٹینک گائیڈڈ میزائل (اے ٹی جی ایم) سے لیس ہیں، رف ٹیرین فورک لفٹ ٹرک (آر ایف ایل ٹی) اور ویپن لوکٹنگ ریڈارز (ڈبلیو ایل آر) کو خریدنے کی منظوری دی ہے۔





      بحریہ کے لیے کتنے کروڑ کے لیے جنگی جہازوں کو دی گئی منظوری
      بحریہ (Indian Navy) کے لیے 36 ہزار کروڑ مالیت کے کارویٹ (جنگی جہاز-ج Warships) کو منظوری دی گئی ہے۔ اگرچہ جنگی جہازوں کی تعداد نہیں بتائی گئی لیکن وزارت دفاع (Ministry Of Defence) کے مطابق یہ نیکسٹ جنریشن کوروٹ (NJC) ورسٹائل جنگی جہاز ہوں گے۔ ان جنگی جہازوں کو نگرانی کے مشن، ایسکارٹ آپریشنز، سرفیس ایکشن گروپس، سرچ اینڈ اٹیک اور ساحلی حفاظت کے لیے استعمال کیا جائے گا۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: