ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

بیوی کو زنجیروں سے باندھ کر کئی مہینوں سے گھر میں کر رکھا تھا قید، کرتا تھا مارپیٹ، دردناک ہے کہانی

متاثرہ خاتون کی ٹانگوں کو زنجیروں سے باندھا گیا تھا اور اسے بہت بری حالت میں رکھا گیا تھا۔ اس عورت پر اس طرح تشدد کیا گیا کہ اس کی ذہنی حالت بھی خراب ہوگئی۔

  • UNI
  • Last Updated: Aug 25, 2020 05:41 PM IST
  • Share this:
بیوی کو زنجیروں سے باندھ کر کئی مہینوں سے گھر میں کر رکھا تھا قید، کرتا تھا مارپیٹ، دردناک ہے کہانی
زنجیروں میں بندھی ہوئی خاتون کو خواتین کمیشن نے بچایا

نئی دہلی۔ دہلی خواتین کمیشن نے ترلوک پوری علاقے میں شوہر کے ذریعہ گزشتہ چھ ماہ سے زنجیروں میں باندھ کر رکھی گئی ایک 32 سالہ خاتون کو رہا کرایا ہے۔ دہلی خواتین کمیشن کی چیئرپرسن سواتی مالیوال نے کہا کہ ہمیں اپنی مقامی سطح پر کام کرنے والی مہیلا پنچایت کے توسط سے اس بارے میں شکایت موصول ہوئی۔ جیسے ہی مجھے اطلاع ملی، میں کمیشن کے ممبر فردوس خان اور کرن نیگی کے ساتھ  دیئے گئے پتے پر پہنچی اور خاتون کی حالت دیکھ کر حیران رہ گئی۔ متاثرہ خاتون کی ٹانگوں کو زنجیروں سے باندھا گیا تھا اور اسے بہت بری حالت میں رکھا گیا تھا۔ اس عورت پر اس طرح تشدد کیا گیا کہ اس کی ذہنی حالت بھی خراب ہوگئی۔ ہم نے اس خاتون کو رہا کروایا اور اب اس کے علاج اور بازیابی کے ساتھ ساتھ ملزم شوہر کے خلاف ایف آئی آر درج کرانے کی کوشش کر رہے ہیں۔



سواتی مالیوال کی سربراہی میں کمیشن کے ممبر فردوس خان اور کرن نیگی پولس کے ہمراہ دیئے گئے پتے پر پہنچے۔ وہاں دی گئی اطلاعات درست پائی گئیں۔ ٹیم نے دیکھا کہ گھر کے برآمدے میں ایک عورت زنجیروں سے جکڑی زمین پر بیٹھی تھی۔ اس سے بات کرنے پر اس نے بتایا کہ اس کے شوہر نے چھ ماہ سے زنجیروں سے باندھ رکھا ہے۔ خاتون کی حالت بہت خراب تھی اور اس کے کپڑے پھٹے ہوئے تھے۔ جہاں اسے رکھا گیا تھا وہاں کوئی پنکھا نہیں تھا اور اسے باتھ روم جانے کی اجازت نہیں تھی۔ خاتون نے بتایا کہ اس کی شادی کے 11 سال ہوچکے ہیں اور اس کے تین بچے ہیں۔ اس خاتون کو اتنی بری طرح مارا پیٹا گیا کہ اس کی ذہنی حالت بھی خراب ہوگئی۔


متاثرہ خاتون کا شوہر گھر کے قریب آٹے کی چکی چلاتا ہے۔ تفتیش کے دوران یہ بھی پتہ چلا کہ اس خاتون کی ذہنی حالت اس سے قبل ٹھیک تھی اور شوہر کی طرف سے ہراساں کیے جانے سے اس کی ذہنی صحت پر گہرا اثر پڑا ہے۔ متاثرہ عورت کے تین بچے بھی ہیں، جن پر اکثر حملہ کیا جاتا ہے۔ جب ٹیم نے بچوں سے بات کی تو انہوں نے بتایا کہ ان کے والد نے ان کی ماں کو بہت مارا اور اسے زنجیر سے باندھ رکھا ہے۔
Published by: Nadeem Ahmad
First published: Aug 25, 2020 05:41 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading