உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    حج 2016 : دہلی سے 340 عازمین حج پر مشتمل پہلا قافلہ سفر مقدس کے لئے روانہ

    نئی دہلی۔   سفر حج پر جانے والے  دہلی کے عازمین حج کا پہلا قافلہ  دیر رات سعودی عرب کے لئے روانہ ہوا ،جس میں 340 افراد شامل تھے۔

    نئی دہلی۔ سفر حج پر جانے والے دہلی کے عازمین حج کا پہلا قافلہ دیر رات سعودی عرب کے لئے روانہ ہوا ،جس میں 340 افراد شامل تھے۔

    نئی دہلی۔ سفر حج پر جانے والے دہلی کے عازمین حج کا پہلا قافلہ دیر رات سعودی عرب کے لئے روانہ ہوا ،جس میں 340 افراد شامل تھے۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:

      نئی دہلی۔  مقدس سفر حج پر جانے والے عازمین کا پہلا قافلہ  دیر رات سعودی عرب کے لئے روانہ ہوا ،جس میں 340 افراد شامل تھے۔ مرکزی وزیر مملکت برائے اقلیتی امور (آزادانہ چارج ) مختار عباس نقوی نے یہاں اندرا گاندھی انٹرنیشنل ایئرپورٹ پر واقع حج ٹرمنل سے عازمین کے پہلے قافلے کو روانہ کیا۔


      اس موقع پر دہلی کے نائب وزیر اعلی منیش سسودیا، مرکزی حج کمیٹی کے چیئرمین محبوب علی قیصر، دہلی اسٹیٹ حج کمیٹی کے چیئرمین اشراق احمد ایم ایل اے، وزارت خارجہ کے جوائنٹ سکریٹری راکیش موہن، کونسلر سیما طاہرہ اور دہلی حج کمیٹی کے ایگزیکٹیو افسر اشفاق عارفی کے علاوہ حج امور سے متعلق دیگر افسران اور عہدیداران موجود تھے۔
      عازمین حج کو روانہ کرتے ہوئے مسٹر نقوی نے عازمین سے ملک میں امن، خوشحالی، قومی آہنگی اور پوری دنیا سے دہشت گردی کے خاتمے کے لئے دعا کرنے کی اپیل کرتے ہوئے عازمین کے فریضہ حج ادا کرکے صحیح سلامت واپسی کی آرزو کی۔


      دہلی سے عازمین حج کی دوسری پرواز آج صبح ساڑھے گیارہ بجے روانہ ہوگی، جس میں 338 عازمین کے علاوہ ایک شیر خوار بچہ بھی شامل ہے۔ آج رات ساڑھے دس بجے تیسری پرواز روانہ ہوگی، جس میں 330 عازمین دہلی کے جب کہ دس اترپردیش کے ہوں گے۔ دہلی امبارکیشن پوائنٹ سے سفر حج کے لئے روانہ ہونے والوں میں دہلی کے  عازمین کے علاوہ اترپردیش، ہریانہ، ہماچل پردیش، چنڈی گڑھ اور اتراکھنڈ کے عازمین شامل ہوں گے۔


      hajj 2016,2


      حج 2016 میں ہندوستان سے مرکزی حج کمیٹی کے ذریعے ملک بھر کے 21 امبارکیشن پوائنٹ سے ایک لاکھ 20 عازمین سفر حج کے لئے روانہ ہوں گے جب کہ 36 ہزار عازمین مختلف ٹور آپریٹرز کے ذریعے سفر حج پر جائیں گے، جس کی سہولت کے لئے مرکزی حکومت، ریاستی حکومتوں اور دیگر متعلقہ ایجنسیوں نے خاطر خواہ اقدامات کئے ہیں۔ تاکہ عازمین کو کسی طرح کی دشواری کا سامنا نہ کرنا پڑے۔

      First published: