ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

نظام الدین اولیاء درگاہ میں خواتین کے داخلے کی ممانعت پردہلی ہائی کورٹ نے طلب کیا جواب

پونے کی قانون کی تین طالبات نےعدالت سے اپنی درخواست میں کہا ہے کہ خواجہ نظام الدین اولیاء کی درگاہ میں خواتین کو رسائی کی اجازت نہیں ہے۔ جبکہ انتظامیہ نے پابندی کے الزام کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ خواتین کے لئے بہت بہترانتظام ہے۔

  • Share this:
نظام الدین اولیاء درگاہ میں خواتین کے داخلے کی ممانعت پردہلی ہائی کورٹ نے طلب کیا جواب
پونے کی قانون کی تین طالبات نےعدالت سے اپنی درخواست میں کہا ہے کہ خواجہ نظام الدین اولیاء کی درگاہ میں خواتین کو رسائی کی اجازت نہیں ہے۔ جبکہ انتظامیہ نے پابندی کے الزام کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ خواتین کے لئے بہت بہترانتظام ہے۔

نئی دہلی: دہلی ہائی کورٹ نے حضرت نظام الدین اولیاء کی درگاہ میں خواتین کے داخلے کی ممانعت پر سخت موقف اختیار کرتے ہوئے مرکزی حکومت، دہلی حکومت اور درگاہ ٹرسٹ کو نوٹس جاری کرکے جواب مانگا ہے کہ خواتین کو درگاہ میں داخل ہونے کی اجازت کیوں نہیں دی جارہی ہے۔

چیف جسٹس راجندر مینن اور جسٹس وی کے راؤ نے معاملے کی سماعت کے بعد مرکز، دہلی حکومت اور درگاہ ٹرسٹ کی مینجمنٹ کمیٹی کو نوٹس جاری کر کے آئندہ 11 اپریل 2019 تک جواب طلب کیا ہے۔

پونے  کی قانون کی تین طالبات نے عدالت سے اپنی درخواست میں کہا ہے کہ خواجہ نظام الدین اولیاء کی درگاہ میں خواتین کو رسائی کی اجازت نہیں ہے۔ درخواست گزاروں کے وکیل نے کہا کہ درگاہ کے باہر نوٹس بورڈ لگا ہے، جس میں انگریزی اورہندی میں واضح لکھا ہے کہ درگاہ کے اندر خواتین کو داخل ہونے کی اجازت نہیں ہے۔


dargah...


قانون کی طالبات نے اپنی عرضی میں دلیل دی کہ انہوں نے دہلی پولیس سمیت افسران کو کئی میمورنڈم دیئے، لیکن ان کی طرف سے کوئی جواب نہیں آیا ہے اوراس کے بعد انہوں نے ہائی کورٹ کا رخ کیا۔

New Delhi: External Affairs Minister Sushma Swaraj with Syed Asif Nizami, the head priest of Hazrat Nizamuddin Aulia Dargah, and his nephew Nazim Ali Nizami, who went missing in Pakistan last week, after a meeting at Jawaharlal Bhawan in New Delhi on Monday. MoSes for External Affairs V K Singh and MJ Akbar are also seen. PTI Photo by Manvender Vashist   (PTI3_20_2017_000190B)
New Delhi: External Affairs Minister Sushma Swaraj with Syed Asif Nizami, the head priest of Hazrat Nizamuddin Aulia Dargah, and his nephew Nazim Ali Nizami, who went missing in Pakistan last week, after a meeting at Jawaharlal Bhawan in New Delhi on Monday. MoSes for External Affairs V K Singh and MJ Akbar are also seen. PTI Photo by Manvender Vashist (PTI3_20_2017_000190B)


 

عرضی میں مرکزی حکومت، دہلی حکومت، پولیس اوردرگاہ کی مینیجنگ کمیٹی کودرگاہ تک خواتین کوداخل ہونے دینے کے لئے احکامات دیئے اورخواتین کے داخلے پرپابندی لگانے کو 'غیرقانونی' قرار دینے کے احکامات دیئے جانے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔

Devotees light incense sticks at the Nizamuddin Dargah, the burial site of revered Sufi saint Nizamuddin Auliya in New Delhi, India, Thursday, Dec. 6, 2018. (AP Photo/Altaf Qadri)
Devotees light incense sticks at the Nizamuddin Dargah, the burial site of revered Sufi saint Nizamuddin Auliya in New Delhi, India, Thursday, Dec. 6, 2018. (AP Photo/Altaf Qadri)


وہیں دوسری طرف درگاہ کمیٹی کا کہنا ہے کہ درگاہ میں کسی طرح کی کوئی پابندی نہیں ہے بلکہ درگاہ میں خواتین کے لئے بہترانتظام ہے۔ انتظامیہ کا یہ بھی کہنا ہے کہ لوگ درگاہ کو بدنام کررہے ہیں۔

یواین آئی ان پٹ کے ساتھ
First published: Dec 10, 2018 08:02 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading