உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    دہلی فسادات : آصف ، دیوانگنا اور نتاشا کی ضمانت کے خلاف دہلی پولیس کی عرضی پر سپریم کورٹ میں کل ہوسکتی ہے سماعت

    دہلی فسادات : آصف ، دیوانگنا اور نتاشا کی ضمانت کے خلاف دہلی پولیس کی عرضی پر سپریم کورٹ میں کل ہوسکتی ہے سماعت

    دہلی فسادات : آصف ، دیوانگنا اور نتاشا کی ضمانت کے خلاف دہلی پولیس کی عرضی پر سپریم کورٹ میں کل ہوسکتی ہے سماعت

    Delhi Riots : دہلی پولیس نے ہائی کورٹ کے ذریعہ ملزمان کو دی گئی ضمانت کے خلاف سپریم کورٹ میں عرضی داخل کی تھی ، جس پر کل سپریم کورٹ سماعت کر سکتا ہے ۔ فی الحال معاملے کی سماعت زیرالتوا ہے ۔

    • Share this:
    نئی دہلی : کڑکڑڈوما ٹرائل کورٹ کے ذریعہ جے این یو طلبہ دیوانگنا کلیتا، نتاشا نروال اور جامعہ ملیہ اسلامیہ کے طالب علم فلم آصف اقبال تنہا کی فوری رہائی کا حکم صادر کئے جانے کے خلاف دہلی ہائی کورٹ پہنچی دہلی پولیس کی عرضی پر ابھی تک سماعت نہیں ہوئی ہے ۔ البتہ سماعت کیلئے لسٹ ضرور ہوئی تھی ، لیکن سماعت زیرالتوا ہے ۔ اس سے پہلے کڑکڑ دوما عدالت نے دہلی پولیس کی اس عرضی کو خارج کرتے ہوئے ملزمان کی فوری رہائی کا حکم دیا تھا ، جس میں ملزمان کے کی ضمانت پیش کرنے والے افراد کے پتے اور دیگر کاغذات کی شناخت کی کارروائی پوری کرنے کیلئے تین سے چار دنوں کا وقت طلب کیا گیا تھا ۔

    آج عدالت نے اپنا فیصلہ سناتے ہوئے راحت دینے سے انکار کردیا ۔ حالانکہ دہلی پولیس کو کو عدالت کے فیصلے کا بخوبی اندازہ تھا اور یہی وجہ تھی کہ فیصلہ آنے سے قبل ہی دہلی ہائی کورٹ میں دہلی پولیس نے کڑکڑ ڈوما عدالت کے فیصلے کے خلاف عرضی داخل کر دی تھی ۔ لیکن ابھی تک ہائی کورٹ میں اس معاملہ پر سنوائی نہیں ہوئی ہے ۔

    سپریم کورٹ میں کل ہوسکتی ہے سماعت

    ادھر دہلی پولیس نے ہائی کورٹ کے ذریعہ ملزمان کو دی گئی ضمانت کے خلاف سپریم کورٹ میں عرضی داخل کی تھی ، جس پر کل سپریم کورٹ سماعت کر سکتا ہے ۔ فی الحال معاملے کی سماعت زیرالتوا ہے ۔

    غور طلب ہے کہ دہلی پولیس یواے پی اے کے تحت جیلوں میں بند نتاشا نروال ، آصف اقبال تنہا اور دیوانگنا کلیتا کو دہلی ہائی کورٹ کے ذریعہ دی گئی ضمانت پر رہائی کو روکنے کے لئے کمر کس چکی تھی ۔ اس سلسلہ میں جہاں پولیس نے سپریم کورٹ میں ایس ایل پی دائر کی ، تو وہیں کڑکڑڈوما کورٹ سے ضمانتی افراد کے ویریفکیشن کے لئے تین دنوں کا وقت مانگا تھا ، جس کی وجہ سے ملزمان کی رہائی پر تذبذب بنا ہوا تھا ۔

    دراصل دہلی فساد کی سازش کے معاملہ میں دہلی ہائی کورٹ نے یواے پی اے کے تحت گرفتار اور جیل میں بند نتاشا نروال ، آصف اقبال تنہا اور دیوانگنا کلیتا کو ضمانت دے دی تھی ۔ تاہم اب اس معاملہ میں دہلی پولیس ضمانت کے فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ پہنچ گئی ۔ دہلی پولیس نے سپریم کورٹ میں ایس ایل پی دائر کرتے ہوئے دہلی ہائی کورٹ کے فیصلے پر سپریم کورٹ سے ازسر نو غور کرنے کی گزارش کی ہے ۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: