ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

Delhi Violence : وکیل محمود پراچہ کے دفتر پر دہلی پولیس نے مارا چھاپہ ، دی یہ دلیل

پولیس کا کہنا ہے کہ کورٹ سے سرچ وارنٹ حاصل کرنے کے بعد یہ کارروائی کی گئی ہے ۔ یہ کارروائی دہلی تشدد سے وابستہ معاملات میں کی گئی ہے ۔

  • Share this:
Delhi Violence : وکیل محمود پراچہ کے دفتر پر دہلی پولیس نے مارا چھاپہ ، دی یہ دلیل
Delhi Violence : وکیل محمود پراچہ کے دفتر پر دہلی پولیس نے مارا چھاپہ ، دی یہ دلیل ۔ فائل فوٹو ۔

دہلی تشدد معاملہ میں دہلی پولیس نے ایڈووکیٹ محمود پراچہ کے دفتر پر چھاپہ مارا ہے ۔ پولیس نے کہا کہ کورٹ سے سرچ وارنٹ حاصل کرنے کے بعد یہ کارروائی کی گئی ہے ۔ یہ کارروائی دہلی تشدد سے وابستہ معاملات میں کی گئی ہے ۔


شمال مشرقی دہلی میں 23 سے 27 فروری کے درمیان ہوئے تشدد میں 53 لوگ مارے گئے تھے ۔ اس کی جانچ کیلئے دہلی اقلیتی کمیشن نے نو مارچ کو نو اراکین پر مشتمل کمیٹی تشکیل دی تھی ۔




دہلی پولیس نے اس معاملہ میں 15 ملزمین کے خلاف ایک چارج شیٹ داخل کی تھی ۔ تکنیکی ثبوتوں کو جمع کرنے کے ساتھ ہی دہلی پولیس نے  معاملہ میں 747 گواہوں سے پوچھ گچھ کی تھی ۔

تشدد میں مارے گئے تھے 53 لوگ

شہریت ترمیمی قانون ( سی اے اے) کے خلاف احتجاج کررہے لوگوں اور اس قانون کی حمایت کرنے والوں کے درمیان 24 فروری کو شمال مشرقی دہلی میں جھڑپ ہوگئی تھی ، جو کہ تشدد میں بدل گئی ۔ اس دوران کم از کم 53 افراد مارے گئے تھے اور تقریبا 200 لوگ زخمی ہوگئے تھے ۔ معاملہ میں اتوار کو عمر خالد کوگرفتار کیا گیا تھا ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Dec 24, 2020 11:58 PM IST