உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    قبرستانوں میں تدفین کو لے کر دہلی وقف بورڈ کا نیا مسودہ ، 5 ہزار سے 10 ہزار روپے تک دینی ہوگی سالانہ فیس

    علامتی تصویر

    علامتی تصویر

    دہلی وقف بورڈ نے اپنےزیر انتظام قبرستانوں کو لے کر نئی پالیسی کا مسودہ تیار کیا ہے ، جس میں تدفین کیلئے پانچ ہزار سے 10 ہزار روپے سالانہ فیس کی تجویز ہے۔

    • Share this:
      نئی دہلی : دہلی وقف بورڈ نے اپنےزیر انتظام قبرستانوں کو لے کر نئی پالیسی کا مسودہ تیار کیا ہے ، جس میں تدفین کیلئے پانچ ہزار سے 10 ہزار روپے سالانہ فیس کی تجویز ہے۔ سالانہ فیس کی تجویز قبروں کیلئے زمین کی کمی اور تجاوزات کی پریشانی کی وجہ سے پیش کی گئی ہے۔
      وقف بورڈ کے ایک افسر کے مطابق قبر والی جگہ کے دوبارہ استعمال کا بھی مشورہ دیا گیا ہے اور یہ کہا گیا ہے کہ اب کسی بھی مستقل قبر کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ تین سال کی مدت کیلئے قبر کی جگہ الاٹ کی جائے گی ۔ تاہم فیس ادا کرکے اس کی مدت 30 سال تک بڑھائی جاسکتی ہے۔
      قبر کی زمین کے تین سال کے الاٹمنٹ کیلئے فی سال پانچ ہزار روپے ادا کرنا ہوگا اور اگر اس کی مدت تین سال سے زیادہ بڑھائی جاتی ہے تو اس کے بعد فی سال 10 ہزار روپے کی فیس ادا کرنی ہوگی ۔ پالیسی کے مسودہ کے مطابق قبر کی زمین کے الاٹمنٹ کی زیادہ سے زیادہ مدت 30 سال ہوگی۔
      دستیاب ریکارڈ کے مطابق دہلی وقف بورڈ کے تحت 573 قبرستان ہیں تاہم ان میں سے صرف 143 قبرستانوں میں ہی تدفین کی سہولیات موجود ہے۔ زیادہ تر قبرستانوں پر غیر قانونی قبضہ ہے۔
      First published: