உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    نوٹ بندی پر راج ناتھ کی میٹنگ میں نہیں پہنچا اپوزیشن، پارلیمنٹ میں ہنگامہ

    آج مرکزی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے کل جماعتی میٹنگ بلائی تھی، جس میں انہیں تمام جماعتوں کے رہنماؤں سے ملاقات کرنی تھی، لیکن حزب اختلاف اس میٹنگ میں نہیں پہنچا۔

    آج مرکزی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے کل جماعتی میٹنگ بلائی تھی، جس میں انہیں تمام جماعتوں کے رہنماؤں سے ملاقات کرنی تھی، لیکن حزب اختلاف اس میٹنگ میں نہیں پہنچا۔

    آج مرکزی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے کل جماعتی میٹنگ بلائی تھی، جس میں انہیں تمام جماعتوں کے رہنماؤں سے ملاقات کرنی تھی، لیکن حزب اختلاف اس میٹنگ میں نہیں پہنچا۔

    • IBN Khabar
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی۔ نوٹ بندی پر پارلیمنٹ سے لے کر سڑک تک سیاسی جنگ تیز ہوتی جا رہی ہے۔ ایوان میں وزیر اعظم نریندر مودی سے جواب مانگ رہا اپوزیشن اپنے جارحانہ رخ پر قائم ہے تو وہیں سڑک پر ٹی ایم سی سربراہ ممتا بنرجی سمیت پورے اپوزیشن نے حکومت کے خلاف محاذ کھول رکھا ہے۔ پارلیمنٹ میں اپوزیشن مسلسل ہنگامہ کر رہا ہے اور کارروائی ہر دن ملتوی ہو رہی ہے۔

      حکومت پارلیمنٹ میں جاری اس تعطل کو دور کرنے کی کوشش میں ہے، لیکن اپوزیشن ماننے کو راضی نہیں۔ آج مرکزی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے کل جماعتی میٹنگ بلائی تھی، جس میں انہیں تمام جماعتوں کے رہنماؤں سے ملاقات کرنی تھی، لیکن حزب اختلاف اس میٹنگ میں نہیں پہنچا۔ جانیں اپڈیٹ۔

      راجیہ سبھا کی کارروائی شروع ہوتے ہی مچا ہنگامہ۔ ارون جیٹلی نے کہا، اپوزیشن نوٹ بندی پر بحث شروع کرے۔ منموہن سنگھ کو بولنے دیا جائے۔ ڈپٹی چیئرمین نے کہا سوال کے بعد ہی نوٹ بندی پر بحث شروع ہوگی۔

      لوک سبھا میں ہنگامہ، کارروائی 12 بجے تک ملتوی

      akhilesh_sansad

      يوپي کے وزیر اعلی اکھلیش یادو بھی پارلیمنٹ ہاؤس پہنچے۔ وزیر اعظم نریندر مودی سے ملنے پہنچے ہیں اکھلیش۔

      پارلیمنٹ میں اپوزیشن کی میٹنگ ختم۔ اپوزیشن حکومت کے ساتھ میٹنگ نہیں کرے گا۔ اپوزیشن کا مطالبہ، وزیر اعظم کو راجیہ سبھا میں تمام 24 مقررین کو سننا  ہو گا۔ 28 نومبر کو اپوزیشن آکروش ریلی کے پیش نظر پھر ملاقات کرے گا۔

      اننت کمار، پارلیمانی امور کے وزیر: ہم اپوزیشن سے مسلسل نوٹ بندی پر بحث کرنے کے لئے کہہ رہے ہیں۔ ہم نے اپوزیشن کے ساتھ کوئی سرکاری میٹنگ نہیں بلائی ہے۔ راج ناتھ سنگھ کی جانب سے بلائی گئی میٹنگ سرکاری نہیں ہے۔

      ملکا ارجن كھڑگے، کانگریس رہنما : اگر وزیر اعظم نے بلایا ہوتا تو ضرور جاتے۔ اگر راج ناتھ سنگھ چاہیں تو وہ میٹنگ میں آ سکتے ہیں۔ ہم پہلے ملاقات کریں گے پھر فیصلہ کریں گے کہ ان کی میٹنگ میں جانا ہے یا نہیں۔

      نریش اگروال، سماجوادی پارٹی رہنما: ہم وزیر اعظم کے ساتھ میٹنگ کرنا چاہتے ہیں، راج ناتھ سنگھ یا وینکیا نائیڈو کے ساتھ نہیں۔

      کانگریس لیڈر غلام نبی آزاد نے آج صبح 10 بجے تمام اپوزیشن جماعتوں کی میٹنگ بلائی تھی۔ راج ناتھ نے بھی اسی وقت پر کل جماعتی میٹنگ طلب کی تھی۔ اپوزیشن جماعتوں نے یکجہتی دکھانے کے لئے ایک ہی وقت پر میٹنگ طلب کی تھی۔ اپوزیشن کا کہنا ہے کہ چند پارٹیوں کو ہی بلا کر حکومت ان کے اتحاد کو توڑنا چاہتی ہے۔

       





      First published: