உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Eastern Ladakh LAC Tension: ہندوستان اور چین زیر التوا متنازع معاملات کو جلد حل کرنے پر متفق ، جاری رہے گی بات چیت

    Eastern Ladakh LAC Tension: ہندوستان اور چین زیر التوا متنازع معاملات کو جلد حل کرنے پر متفق ، جاری رہے گی بات چیت ۔ ( تصویر : اے این آئی )

    Eastern Ladakh LAC Tension: میٹنگ کے بعد پیر کے روز جاری ہونے والے مشترکہ بیان میں کہا گیا ہے کہ دونوں فریقوں نے سرحدی علاقہ کے مغربی سیکٹر میں لائن آف کنٹرول سے متصل علاقوں سے فوجیوں کے انخلاء سے متعلق دیگرمسائل کے حل پر واضح اور سنجیدگی سے تبادلہ خیال کیا ۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:



      نئی دہلی : ہندوستان اور چین کی مسلح افواج کے کور کمانڈوز کی میٹنگ میں مشرقی لداخ میں لائن آف کنٹرول سے متصل علاقوں کے زیر التوا متنازع مسائل کو موجودہ معاہدوں اور پروٹوکول کے تحت جلد از جلد حل کرنے پر اتفاق کیا گیا ہے ۔ دونوں اطراف کے کور کمانڈروں کے درمیان ملاقاتوں کا بارہواں دور ہفتہ کے روز مالڈو علاقے میں منعقد ہوا۔

      میٹنگ کے بعد پیر کے روز جاری ہونے والے مشترکہ بیان میں کہا گیا کہ یہ ملاقات دونوں ملکوں کے وزرائے خارجہ کی 14 جولائی کو تاجکستان کے دارالحکومت دوشنبے میں ہونے والی ملاقات اور ہند - چین سرحدی کوآرڈنیشن کی 25 جولائی کو ہونے والی میٹنگ کے پس منظر میں ہوئی اور اس میں معنی خیز بات چیت ہوئی۔

      بیان میں کہا گیا ہے کہ دونوں فریقوں نے سرحدی علاقہ کے مغربی سیکٹر میں لائن آف کنٹرول سے متصل علاقوں سے فوجیوں کے انخلاء سے متعلق دیگرمسائل کے حل پر واضح اور سنجیدگی سے تبادلہ خیال کیا ۔ دونوں فریقوں نے کہا ہے کہ مذاکرات کا یہ دور تعمیری نوعیت کا حامل رہا ہے ، جس سے باہمی افہام و تفہیم اور اعتماد میں اضافہ ہوا ہے۔

      انہوں نے بقیہ مسائل کو موجودہ معاہدوں اور پروٹوکول کے تحت تیزی سے حل کرنے اور بات چیت اور مذاکرات کے عمل کو برقرار رکھنے پر اتفاق کیا گیا ۔ دونوں فریقوں نے اس بات پر بھی اتفاق کیا کہ وہ مغربی سیکٹر میں لائن آف کنٹرول پر امن اور دوستی کی فضا برقرار رکھنے کی کوششیں جاری رکھیں گے۔

      بات چیت کیلئے ہاٹ لائن قائم

      ادھر شمالی سکم کے کونگرالا میں ہندوستانی فوج اور تبتی آٹونومس ریجن کے کھمبادزونگ میں چین کی پیپلز لبریشن آرمی (پی ایل اے) کے درمیان گزشتہ روز ایک ہاٹ لائن قائم کی گئی ۔ مشرقی لداخ میں چین کے ساتھ تعطل کے درمیان اس ہاٹ لائن کو قائم کرنے کا بنیادی مقصد دونوں ممالک کے مابین سرحدوں پراعتماد اور خوشگوار تعلقات کوآگے بڑھانا ہے ۔ ہاٹ لائن کا قیام پی ایل اے ڈے پر ہوا ہے ۔

      وزارت دفاع نے ایک بیان میں کہا کہ دونوں ممالک کی مسلح افواج کے پاس زمینی کمانڈر سطح پر بات چیت کے لئے قائم کردہ نظام ہے ۔ ہاٹ لائن قائم ہونے سے اب ہند ۔ چین کی افواج کے کمانڈروں کے پاس بات چیت کرنے کا ایک آسان ذریعہ مل گیا ہے۔ اس کے افتتاحی موقع پر دونوں ممالک کی افواج کے گراونڈ کمانڈروں نے حصہ لیا۔ ہاٹ لائن ایک طرح کی اسپیشل فون سروس ہے، جس میں ایک شخص دوسرے شخص سے بات چیت کرسکتا ہے ۔


      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: