ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

Eastern Ladakh LAC Tension: نو گھنٹوں تک چلی ہند ۔ چین کے درمیان گفتگو ، گوگرا اور ہاٹ اسپرنگس سے فوج ہٹانے پر زور

Eastern Ladakh LAC Tension: ہندوستان اور چین کے درمیان بارہویں دور کی کور کمانڈر سطح کی گفتگو کا مقصد 14 مہینے سے زیادہ وقت سے اس علاقہ میں جاری تعطل کو ختم کرنا ہے ۔

  • Share this:
Eastern Ladakh LAC Tension: نو گھنٹوں تک چلی ہند ۔ چین کے درمیان گفتگو ، گوگرا اور ہاٹ اسپرنگس سے فوج ہٹانے پر زور
Eastern Ladakh LAC Tension: نو گھنٹوں تک چلی ہند ۔ چین کے درمیان گفتگو ، گوگرا اور ہاٹ اسپرنگس سے فوج ہٹانے پر زور ۔تصویر : اے این آئی ۔

نئی دہلی : ہندوستان اور چین کے درمیان بارہویں دور کی کور کمانڈر سطح کی بات چیت حقیقی کنٹرول لائن ( اے ایل سی) کے چین کی طرف سے اولڈی بارڈر پوائنٹ پر شامل ساڑھے سات بجے ختم ہوئی ۔ نو گھنٹوں تک چلی اس میٹنگ میں دونوں فریقوں نے مشرقی لداخ سیکٹر میں جاری تعطل کو حل کرنے کے معاملہ پر گفتگو کی ۔ نیوز ایجنسی اے این آئی نے فوجی ذرائع کے حوالے سے ہفتہ کو یہ جانکاری دی ۔ دونوں فوج کے درمیان بات چیت مقررہ وقت پر صبح ساڑھے دس بجے شروع ہوئی تھی ۔


ذرائع نے کہا کہ اس میٹنگ کے دوران ہندوستان نے ہاٹ اسپرنگ اور گوگرا میں فوجیوں کی واپسی کے عمل پر زور دیا ۔ حالانکہ فریقین کی جانب سے اس بارے میں آفیشیل بیان جاری ہونا ابھی باقی ہے ۔ ذرائع نے بتایا کہ ہندوستان اور چین کے درمیان بارہویں دور کی کور کمانڈر سطح کی گفتگو کا مقصد 14 مہینے سے زیادہ وقت سے اس علاقہ میں جاری تعطل کو ختم کرنا ہے ۔



انہوں نے بتایا کہ بات چیت کا یہ دور پچھلی مرتبہ ہوئی گفتگو سے ساڑھے تین ماہ سے بھی زیادہ وقت کے بعد ہوئی ہے ۔ اس سے پہلے گیارہویں دور کی فوجی بات چیت نو اپریل کو ایل اے سی پر ہندوستان کی جانب چوشول بارڈر پوائنٹ پر ہوئی تھی اور یہ بات چیت تقریبا تیرہ گھنٹوں تک چلی تھی ۔

خیال رہے کہ دونوں فریقوں کے درمیان اب تک مذاکرات کے 11 دور ہوچکے ہیں ۔ مشرقی لداخ میں ایک سال سے زیادہ عرصے سے دونوں فریقوں کے مابین فوجی تعطل برقرار ہے۔ اب تک فوجی کمانڈروں کی طرف سے طے شدہ اتفاق رائے کی بنیاد پر فوجوں کو پینگونگ جھیل کے علاقے سے واپس بلا لیا گیا ہے۔ لیکن ابھی تک دونوں فریقوں نے کچھ دیگر متنازعہ علاقوں سے فوج کی واپسی کے بارے میں معاہدہ نہیں کیا ہے۔

گذشتہ سال وزیر دفاع راج ناتھ سنگھ اور وزیر خارجہ ایس جے شنکر نے اپنے متعلقہ وزراء سے بیرون ملک منظم پروگراموں میں الگ الگ مواقع پر بات چیت کی تھی ، جس کی بنیاد پر دونوں فریقین نے لائن آف کنٹرول کے ساتھ امن اور باہمی اعتماد بڑھانے پر اتفاق کیا تھا۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Jul 31, 2021 11:24 PM IST