உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    رمضان میں ووٹنگ پر اعتراض کے بعد الیکشن کمیشن کی وضاحت، تیوہاروں کا خیال رکھا، جمعہ کوووٹنگ نہیں

    مسلم خواتین ووٹ ڈالنے کے بعد: فائل فوٹو۔ فوٹو نیوز 18 ڈاٹ کام

    مسلم خواتین ووٹ ڈالنے کے بعد: فائل فوٹو۔ فوٹو نیوز 18 ڈاٹ کام

    الیکشن کمیشن کے سرکاری ذرائع کا کہنا ہے کہ رمضان کے دوران پورے مہینے کےلئے الیکشن کوملتوی نہیں کیا جاسکتا ہے، لیکن اہم تہواروں اورجمعہ کے دن پولنگ کی تاریخ نہیں رکھی گئی ہے۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:
      نئی دہلی: رمضان کے دوران عام انتخابات کے تنازعہ کے درمیان الیکشن کمیشن نے وضاحت کی ہےکہ اس نے لوک سبھا الیکشن کی تاریخوں کا اعلان کرتے ہوئےتہواروں کا خیال رکھا ہے اورجمعہ کے دن پولنگ نہیں رکھی ہے۔
      الیکشن کمیشن کے سرکاری ذرائع کا کہنا ہے کہ رمضان کے دوران پورے مہینے کےلئے الیکشن کوملتوی نہیں کیا جاسکتا ہے، لیکن اہم تہواروں اورجمعہ کے دن پولنگ کی تاریخ نہیں رکھی گئی ہے۔
      خیال رہےکہ الیکشن کمیشن نےاتوارکوگیارہ اپریل سے 19مئی تک لوک سبھا کےانتخابات کرانے کا اعلان کیا جب کہ رمضان 7مئی سے 5جون کے درمیان ہے۔ اس دوران 12مئی اور 19مئی کو پولنگ کی تاریخیں آئیں گی ۔ ان تاریخوں کے مدنظربعض مسلم لیڈروں نے اعتراض کیا تھا تاہم مسلمانوں کے ایک بڑے حلقے کا کہنا ہے کہ الیکشن کی وجہ سے رمضان پرکوئی اثرنہیں پڑے گا کیوں کہ رمضان المبارک میں بھی دیگر کام حسب معمول ہوتے رہتے ہیں۔
      First published: