ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

سندھو بارڈر پر پکڑا گیا 'شوٹر' ، کہا : 26 جنوری کو چار کسان لیڈروں کو گولی مارنے کی تھی سازش

سندھو بارڈر پر کسانوں کے ذریعہ پکڑے گئے مشتبہ شوٹر نے بتایا کہ 26 تاریخ کو جب چار کسانوں لیڈر اسٹیج پر بیٹھے ہوتے تو اسی وقت گولی مارنے کا حکم دیا گیا تھا ۔ اس کیلئے شوٹر کو چار لوگوں کی تصویر بھی دی گئی تھی ۔

  • Share this:
سندھو بارڈر پر پکڑا گیا 'شوٹر' ، کہا : 26 جنوری کو چار کسان لیڈروں کو گولی مارنے کی تھی سازش
سندھو بارڈر پر پکڑا گیا 'شوٹر'، کہا: 26 جنوری کو چار کسان لیڈروں کو گولی مارنے کی تھی سازش

نئے زرعی قوانین کو رد کرانے کی مانگ کو لے کر دہلی ہریانہ سندھو بارڈر پر بیٹھے کسانوں نے سنسنی خیز دعوی کیا ہے ۔ سندھو بارڈر پر جمعہ کی رات کسانوں نے ایک مشبتہ شوٹر کو پکڑا ہے ۔ میڈیا سے بات کرتے ہوئے اس مبینہ شوٹر نے دہلی پولیس پر سنگین الزامات لگائے ۔ اس کا کہنا ہے کہ 26 جنوری کو کچھ غلط ہونے پر اسٹیج پر بیٹھے چار کسان لیڈروں کو گولی مارنے کا اس کو حکم دیا گیا تھا ۔


پکڑے گئے شوٹر نے دعوی کیا کہ 26 جنوری کو کسان ٹریکٹر ریلی میں وہ گولی چلاکر ماحول خراب کرنے کی سازش رچنے والا تھا ۔ کسانوں نے جس مشتبہ کو پکڑ ہے اس نے بتایا کہ 23 سے 26 جنوری کے درمیان کسان لیڈروں کو گولی ماری جانی تھی اور خواتین کا کام لوگوں کو بھڑکانا تھا ۔ شوٹر نے اعتراف کیا کہ اس نے جاٹ آندولن میں بھی ماحول بگاڑنے کا کام کیا ہے ۔




مشتبہ شخص کے مطابق مظاہرہ کررہے کسان ہتھیار لے کر جارہے ہیں یا نہیں ، یہ پتہ لگانے کیلئے دو ٹیمیں لگائی گئی ہیں ۔ مشتبہ شوٹر نے بتایا کہ 26 تاریخ کو جب چار کسانوں لیڈر اسٹیج پر بیٹھے ہوتے تو اسی وقت مارنے کا حکم دیا گیا تھا ۔ اس کیلئے شوٹر کو چار لوگوں کی تصویر بھی دی گئی تھی ۔

شوٹر کا کہنا تھا کہ وہ 19 جنوری سے سندھو بارڈر پر ہے ۔ اس نے بتایا کہ جب 26 جنوری کو کسان ٹریکٹر ریلی نکالتے تو وہ کسانوں کے ساتھ ہی مل جاتا ۔ اگر مظاہرین پریڈ کے ساتھ نکلتے تو ہمیں ان پر فائرنگ کرنے کیلئے کہا گیا تھا ۔

سندھو بارڈر پر پکڑے گئے شوٹر کو کرائم برانچ کے دفتر لے جایا گیا ہے ۔ پوچھ گچھ کے دوران پتہ چلا ہے کہ ملزم کا نام یوگیش ہے اور وہ سونی پت کے نیوجیون نگر کا رہنے والا ہے ۔ پولیس کے مطابق ملزم نویں فیل ہے اور اس کا ابھی تک کوئی مجرمانہ ریکارڈ نہیں ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Jan 23, 2021 08:13 AM IST