உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    فاروق عبداللہ کی وارننگ "دفعہ 35 اے پرمرکزی حکومت واضح کرے موقف، ورنہ لوک سبھا الیکشن کا کریں گے بائیکاٹ"۔

    فاروق عبداللہ : فائل فوٹو

    فاروق عبداللہ : فائل فوٹو

    فاروق عبداللہ نے پنچایت انتخابات کے بائیکاٹ کے اعلان کے اب مرکزی حکومت کو سخت وارننگ دی ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
      جموں وکشمیرکے سابق وزیراعلیٰ نے ایک بار پھر مرکزی حکومت کووارننگ دی ہے۔ سری نگرمیں منعقدہ ایک تقریب میں فاروق عبداللہ نے کہا کہ اگر دفعہ 370 اور آرٹیکل  35 اے پررخ واضح نہیں کیا گیا تو نیشنل کانفرنس لوک سبھا الیکشن اوراسمبلی انتخابات کا بائیکاٹ کرے گی۔

      واضح رہے کہ اس سے قبل فاروق عبداللہ پنچایت انتخابات کو لے کربھی اعلان کرچکے ہیں۔ جموں وکشمیر میں اکتوبر-نومبرمیں پنچایت میونسپل کارپوریشن کے الیکشن ہونے ہیں، لیکن ریاست میں چل رہی سیاسی ہنگامہ آرائی کے درمیان نیشنل کانفرنس نے انتخابات کے بائیکاٹ کا اعلان کیا ہے۔

      نیشنل کانفرنس کا کہنا تھا کہ پہلے مرکزی حکومت آرٹیکل 35 اے پراپنا رخ واضح کرے۔ اس کے بعد انتخابات کرایا جائے۔ اب دیکھنے کی بات یہ ہوگی کہ کیا فاروق عبداللہ کی دھمکی کا مرکزی حکومت پر کوئی اثرہوتا ہے اوروہ اپنا موقف واضح کرتی ہے یا پھرفاروق عبداللہ اس سے متعلق کوئی فیصلہ لینے پرمجبورہوں گے۔

      یہ بھی پڑھیں:   جموں و کشمیر :  دفعہ 35 اے کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کی کسی کو اجازت نہیں دی جائے گی : فاروق عبداللہ

      یہ بھی پڑھیں:  دفعہ 35 اے سے چھیڑ چھاڑ بھارت کے جموں وکشمیر کے ساتھ رشتے سے چھیڑ چھاڑ کے برابر : محبوبہ مفتی
      First published: