ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

فرخ آباد میں یرغمال بحران ختم، تمام 23 بچے چھڑائے گئے، پولیس انکاؤنٹر میں مارا گیا سرپھرا

فرخ آباد: یوپی کے فرخ آباد ضلع کے کسریا گاؤں میں یرغمال بنائے گئے سبھی 23 بچوں کو بحفاظت چھڑا لیا گیا ہے۔ تقریبا 11 گھنٹے تک چلے اس ہائی وولٹیز ڈرامےکا خاتمہ سرپھرے سبھاش باتھم کی موت کے ساتھ ہوا۔

  • Share this:
فرخ آباد میں یرغمال بحران ختم، تمام 23 بچے چھڑائے گئے، پولیس انکاؤنٹر میں مارا گیا سرپھرا
فرخ آباد: یوپی کے فرخ آباد ضلع کے کسریا گاؤں میں یرغمال بنائے گئے سبھی 23 بچوں کو بحفاظت چھڑا لیا گیا ہے۔ تقریبا 11 گھنٹے تک چلے اس ہائی وولٹیز ڈرامےکا خاتمہ سرپھرے سبھاش باتھم کی موت کے ساتھ ہوا۔

فرخ آباد: یوپی کے فرخ آباد ضلع کے کسریا گاؤں میں یرغمال بنائے گئے سبھی 23 بچوں کو بحفاظت چھڑا لیا گیا ہے۔ تقریبا 11 گھنٹے تک چلے اس ہائی وولٹیز ڈرامےکا خاتمہ سرپھرے سبھاش باتھم کی موت کے ساتھ ہوا۔ بتایا جاتا ہے کہ مزلم سبھاش اور پولیس کے درمیان کافی دیر انکاؤنٹر ہوا۔ جس کے بعد ملزم کو مار گرایا گیا۔ چھڑائے گئے سبھی بچوں کا میڈیکل حکومت کراکر گھر بھیج دیا گیا ہے۔ اغوا کئے گئے بچوں کو إفوظ بچائے جانے پر سی ایم یوگی آدتیہ ناتھ نے خوشی ظاہر کی ہے۔ سی ایم یوگی نے اس آپریشن کو کامیاب بنانے والی پولیس ٹیم کو 10 لاکھ روپئے دینے کا اعلان کیا ہے۔



جعمرات کی شام ملزم شخص نے محلے کے 23 بچوں کو اپنے گھر میں برتھ ڈے پارٹی کا بہانا کرکے بلایا تھا۔ اس کے بعد اس نے ان ان سبھی کو یرغمال بنا لیا۔ ملزم سے بات کرنے کی کوشش کی گئی تو اس نے فائرنگ کی جس کے بعد پولیس ٹیم نے پورے علاقے کا محاصرہ کرلیا تھا۔

First published: Jan 31, 2020 07:31 AM IST