உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    اسپتال کی چھت سے بیٹے کو پھینکا اور پھر خود بھی کود گیا باپ، دونوں کی دردناک موت

    بریلی (Bareilly) ضلع میں حیران کرنے والی خبر سامنے آئی ہیں۔ یہاں ایک شرابی والد نے نو سال کے بچے کو اسپتال کی چھت سے پھینک دیا۔

    بریلی (Bareilly) ضلع میں حیران کرنے والی خبر سامنے آئی ہیں۔ یہاں ایک شرابی والد نے نو سال کے بچے کو اسپتال کی چھت سے پھینک دیا۔

    بریلی (Bareilly) ضلع میں حیران کرنے والی خبر سامنے آئی ہیں۔ یہاں ایک شرابی والد نے نو سال کے بچے کو اسپتال کی چھت سے پھینک دیا۔

    • Share this:
      اتر پردیش کے بریلی (Bareilly) ضلع میں حیران کرنے والی خبر سامنے آئی ہیں۔ یہاں ایک شرابی والد نے نو سال کے بچے کو اسپتال کی چھت سے پھینک دیا۔ ملزم نے اس کے بعد خود بھی چھلانگ لگا دی جس سے دونوں کی موت ہو گئی۔ اطلاع ملتے ہی موقع پر پہنچی پولیس نے دونوں لاشوں کو قبضے میں لیکر جانچ شروع کر دی ہے۔ واقعے کے بعد ایس ایس پی روہت سنگھ سجوان نے باتایا کہ خودکشی کرنے والے شخص کا الکہل ایڈیکشن کو لیکر اسپتال میں علاج چل رہا تھا۔

      واقعہ بریلی کے ضلع پریم نگر کے گنگا شیل اسپتال کا ہے۔ بارادری کے سنجے نگر مقامی دیپک کشیپ کا گنگا شیل اسپتال میں شراب چھوڑنے کا علاج چل رہا تھا۔ بتایا جا رہا ہے کہ اسی دوران دیپن نے اپنے نو سالہ بیٹے دویانش کو چھت ست پھینک دیا اور خود بھی کود گیا۔ آس۔پاس موجو لوگوں نے زخمی دیپک کو فورا اسپتال میں داخل کرایا لیکن کچھ دیر بعد دونوں کی موت ہو گئی ہے۔ فی الھال پولیس معاملے کی جانچ میں مصروف ہے۔

      چندراوتی نے روتے ہوئے بتایا کہ دیپک بہت زیادہ شراب پینے لگا تھا۔ اس وجہ سے ہم لوگ اس کا علاج کرا رہے تھے۔ بتادیں کہ دیپک کی بیوی کا نام کنچن ہے۔ دیپل تین بہنوں کا ایک ہی بھائی تھا۔ سوچ بھی نہیں سکتے تھے کہ دیپک ایسا کر دے گا۔ معصوم بیٹے کے ساتھ دیپک کی موت سے کنبے میں کہرام مچا ہے۔ بریلی کے ایس ایس پی روہت سنگھ سجوان نے بتایا کہ پولیس لاشوں کو پوسٹ مارٹم کیلئے بجھوا رہی ہیں۔ واقعے کے سلسلے میں تفصیلی جانکاری جٹائی جا رہی ہے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: