ہوم » نیوز » No Category

شیلا دکشت کے خلاف ایف آئی آر درج کرائے گی کیجریوال حکومت

دہلی حکومت سابق وزیر اعلی شیلا دکشت کے خلاف کیس درج کرنے کی تیاری کر رہی ہے

  • IBN7
  • Last Updated: Aug 28, 2015 04:16 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
شیلا دکشت کے خلاف ایف آئی آر درج کرائے گی کیجریوال حکومت
دہلی حکومت سابق وزیر اعلی شیلا دکشت کے خلاف کیس درج کرنے کی تیاری کر رہی ہے

نئی دہلی : دہلی حکومت سابق وزیر اعلی شیلا دکشت کے خلاف کیس درج کرنے کی تیاری کر رہی ہے ۔ شیلا دکشت کے علاوہ جل بورڈ کے سابق نائب صدر متین احمد، بھیشم شرما اور شیلا حکومت کے اس وقت کے کئی افسران کے خلاف کیجریوال حکومت ایف آئی آر درج کرانے کی تیاری کر رہی ہے۔


دہلی حکومت شیلا دکشت کے خلاف 400 کروڑ کے پانی کے ٹینکروں کی خریداری میں گھوٹالہ کے معاملہ میں کیس درج کرا سکتی ہے ۔ کیجریوال حکومت نے تقریبا ڈیڑھ ماہ قبل اس پر انکوائری بٹھائی تھی ، جس میں الزامات صحیح پائے گئے ہیں ۔ 2012 میںا سٹیل کے ٹینکر خریدے گئے تھے، جس میں گھوٹالہ کا معاملہ سامنے آیا تھا۔


ادھر شیلا دکشت کے بیٹے سندیپ دکشت نے کیجریوال پر حملہ بولتے ہوئے کہا ہے کہ وہ اپنے نكمےپن کو دوسرے کے سر پر پرڈال رہے ہیں، یہ کیجریوال کی پرانی عادت ہے ان کام ہو نہیں رہا ہے اور حکومت پر الزامات لگا رہے ہیں ۔ دہلی میں دیگر حکومتوں نے بھی تو اچھا کام کیا ہے مرکز میں دوسری حکومت کے رہتے ہوئے۔


ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیراعلی ملزمین کے خلاف رپورٹ کے لئے انسداد بدعنوانی بیورو (اے سی بی) کو لکھ سکتے ہیں۔ یہ معاملہ 2012-13 کا بتایا جارہا ہے جس میں 385اسٹیل کے ٹنکر خریدنے تھے۔ یہ ٹنکر 200کروڑ روپے میں خریدے جاسکتے تھے جبکہ ان کے لئے 600کروڑ روپے کی ادائیگی کی گئی۔


رپورٹ میں اسے ایک بڑا گھپلہ بتایا گیا ہے۔ اس گھپلہ کی تفتیش کے لئے جے سی الگھ کی قیادت میں 24جون کو ایک کمیٹی قائم کی گئی تھی اسی کی رپورٹ کی بنیاد پر یہ سفارش کی گئی ہے۔


خیال رہے کہ اس سے قبل بھی دہلی حکومت نے 100کروڑ روپے کے سی این جی فٹنس گھپلہ کی تفتیش کی ہدایت دی تھی۔ اس میں لیفٹننٹ گورنر نجیب جنگ اور محترمہ دکشت کا نام بھی تھا۔ اس تفتیش کی ہدایت پر لیفٹننٹ گورنر اور دہلی حکومت کے مابین اختلافات سامنے آئے اور لیفٹننٹ گورنر نے اس ہدایت کو غلط قرار دیا۔ بعد میں یہ معاملہ وزارت داخلہ کو بھیجا گیا اور اس نے بھی جانچ کی ہدایت کو ’غیرقانونی‘ قرار دیا۔ اس کے بعد نائب وزیراعلی منیش سسودیا نے سرکار کا موقف سخت کرتے ہوئے کہاکہ وہ تفیتیش کی ہدایت پر قائم ہے اور وزارت داخلہ کی ہدایت غیرآئینی ہے۔

First published: Aug 28, 2015 12:48 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading