Choose Municipal Ward
    CLICK HERE FOR DETAILED RESULTS
    ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

    تاریخ میں پہلی مرتبہ الہ آباد کی اس قدیم عیدگاہ میں نہیں ہوئی عید الفطر کی نماز

    مولانا سعد فاروقی کا کہنا ہے کہ یہ شہر کی عید گاہ کی تاریخ میں پہلی مرتبہ ایسا ہوا کہ یہاں عید کی نماز ادا نہیں کی گئی ۔

    • Share this:
    تاریخ میں پہلی مرتبہ الہ آباد کی اس قدیم عیدگاہ میں نہیں ہوئی عید الفطر کی نماز
    تاریخ میں پہلی مرتبہ الہ آباد کی اس قدیم عیدگاہ میں نہیں ہوئی عید الفطر کی نماز

    الہ آباد میں واقع مرکزی عید گاہ ملک کی ان قدیم عید گاہوں میں سے ایک ہے ، جہاں سب سے پہلے عیدین کی نماز قائم ہوئی تھی ۔ الہ آباد کی قدیم عید گاہ کو خلجی دور حکومت میں تعمیر کرایا گیا تھا ۔ خلجی دور حکومت میں الہ آباد کے کڑا علاقہ کو صوبے کا درجہ دیا گیا تھا ۔ کڑا الہ آباد شہر سے محض تیس کلو میٹر کی دوری پر واقع ہے ۔ یہیں پر خلجی سلطنت کے بانی بادشاہ جلال الدین جلجی کی قبر بھی موجود ہے ۔ مغل باد شاہ اکبر نے جب الہ آباد کو اپنا صوبہ بنایا ، تو سنگم کے کنارے قلعہ تعمیر کرنے کے ساتھ ساتھ عید گاہ کی تو سیع بھی کرائی ۔


    الہ آباد کی عید گاہ کی وسعت کا اندازہ اس بات سے بھی لگایا جا سکتا ہے کہ اس میں بہ یک وقت ایک لاکھ سے زیادہ فرزندان توحید عید کی نماز ادا کر سکتے ہیں ۔ اپنے قیام سے لے کر گزشتہ سال تک تاریخ میں کبھی ایسا موقع نہیں آیا کہ الہ آباد کی عید گاہ عید کے موقع پر ویران رہی ہو ۔ یہاں تک کی اٹھارہ سو ستاون کی پہلی جنگ آزادی اور انیس سو سینتالیس کے پر آشوب دور میں بھی الہ آباد کی عید گاہ میں عیدین کی نماز روایتی شان کے ساتھ ادا کی گئی تھی ۔ لیکن عید گاہ کی تاریخ میں یہ پہلا موقع ہے جب عید کے دن پوری عید گاہ میں سناٹا چھایا رہا ۔


    کورونا وائرس کے خطرات اور سماجی فاصلہ کے ضابطے کے چلتے مقامی انتظامیہ نے شہر کی تمام مساجد کے ساتھ ساتھ عید گاہوں میں بھی نماز ادا کرنے پر پابندی لگا دی تھی ۔ عین عید کے دن عید گاہ کی ویرانی دیکھ کر شہر کے باشندوں نے اپنی گہری افسردگی کا اظہار کیا ہے ۔ خا ص طور سے شہر کا بزرگ طبقہ اس صورت حال سے کافی رنجیدہ نظر آیا ہے ۔ دائرہ شاہ محب اللہ آبادی کے سجادہ نشین مولانا سعد فاروقی کا کہنا ہے کہ شہر کے حالات خواہ کتنے ہی نا گفتہ بہ رہے ہوں ، کبھی ایسا نہیں ہوا کہ عید گاہ میں نماز ادا نہ کی گئی ہو۔


    مولانا سعد فاروقی کا کہنا ہے کہ یہ شہر کی عید گاہ کی تاریخ میں پہلی مرتبہ ایسا ہوا کہ یہاں عید کی نماز ادا نہیں کی گئی ۔ مفتی محمد ہارون ثاقب نے بھی عید گاہ میں نماز ادا نہ ہونے پر اپنے غم کا اظہار کیا ہے ۔ ان کا کہنا ہے کہ صدیوں سے الہ آباد کی عید گاہ میں عیدین کی نماز کا جو تسلسل قائم تھا ، وہ لاک ڈاؤن کی وجہ سے ٹوٹ گیا ۔
    First published: May 25, 2020 05:20 PM IST
    corona virus btn
    corona virus btn
    Loading