ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

گورنرسےعمرعبداللہ کی ملاقات کے بعد بڑا مطالبہ- وادی میں کچھ نہیں ہونےجارہا ہے، یہ پارلیمنٹ کوبتائے مودی حکومت

سابق وزیراعلیٰ عمرعبداللہ نے گورنرستیہ پال ملک سے ملاقات کے بعد بتایا کہ 'ہم نے گورنرسے ریاست کے حالات میں بارے میں تبادلہ خیال کیا۔ ہمیں بتایا گیا ہے کہ مرکزی حکومت کی طرف سے 370 کولےکرکوئی بھی اعلان کرنے کی تیاری نہیں کی جارہی ہے۔

  • Share this:
گورنرسےعمرعبداللہ کی ملاقات کے بعد بڑا مطالبہ- وادی میں کچھ نہیں ہونےجارہا ہے، یہ پارلیمنٹ کوبتائے مودی حکومت
اس سے پہلے نیشنل کانفرنس کے نائب صدر و سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے کہا تھا کہ جموں وکشمیر میں نافذ کئے جانے والے 'ڈومیسائل قانون' نے یہاں کے لوگوں کے زخم تازہ کردیے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ڈومیسائل قانون اتنا کھوکھلا ہے کہ اس کے لئے لابنگ کرنے والی جماعت بھی اس کی مخالفت کررہی ہے۔۔(فائل فوٹو: نیوز18)۔

جموں وکشمیرمیں گزشتہ کچھ دنوں سے کشیدہ حالات کودیکھتے ہوئےنیشنل کانفرنس کے لیڈراورسابق وزیراعلیٰ عمرعبداللہ نے گورنرستیہ پال ملک سے ملاقات کی۔ گورنرستیہ پال ملک سے ملاقات کے بعد عمرعبداللہ نےکہا 'ہم نےگورنرستیہ پال ملک سے ریاست کے حالات سے متعلق تبادلہ خیال کیا۔ ہمیں بتایا گیا ہےکہ مرکزی حکومت کی طرف سے دفعہ 370 کولےکرکوئی بھی اعلان کرنے کی تیاری نہیں کی جارہی ہے۔


عمرعبداللہ نےکہا کہ ابھی تک ہمیں ریاست میں تعینات کسی افسرسے بھی جواب نہیں ملا ہے۔ وزیراعظم نریندرمودی نے یقین دہانی کرائی ہےکہ 35 اے سےکوئی چھیڑچھاڑ نہیں ہوگی۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ وزیراعظم نریندر مودی بھی یہاں جموں وکشمیرمیں الیکشن چاہتے ہیں۔


نیشنل کانفرنس کے لیڈراورسابق وزیراعلیٰ نے کہا کہ ہم جموں وکشمیرکےموجودہ حالات کے بارے میں جاننا چاہتے ہیں۔ جب ہم افسران سے پوچھتے ہیں تووہ کہتے ہیں کہ کچھ تو ہو رہا ہے، لیکن کسی کو نہیں معلوم کہ حقیقت میں کیا ہورہا ہے۔


انہوں نے کہا کہ پیرکوپارلیمنٹ شروع ہونے سے قبل مرکزی حکومت کو بیان دینا چاہئےکہ آخرامرناتھ یاترا ختم کرنےاورسیاحوں کووادی خالی کرانے کےلئے کیوں کہا گیا۔ ہم اسے پارلیمنٹ سے سننا چاہتے ہیں کہ لوگوں کوخوفزدہ ہونےکی کوئی ضرورت نہیں ہے۔  





عمرعبداللہ نےکہا کہ ہم نےگورنرکوبتایا کہ کشمیرکےلوگوں میں 35 اے اور370 کولے کر طرح طرح کی افواہیں چل رہی ہیں۔ گورنرنے ہمیں یقین دہانی کرائی ہے کہ ان سبھی موضوعات میں سے کسی بھی اعلان کی کوئی تیاری نہیں کی جارہی ہے۔ انہوں نےکہا کہ اس موضوع پرگورنرنے جوباتیں ہم سے کہی ہیں، وہ آخری لفظ نہیں ہیں۔ جموں وکشمیرپرہم ہندوستانی حکومت سے یہ بات سننا چاہتے ہیں۔ گورنرجوکچھ بھی عوامی طورپرہمیں بتاتے ہیں، میں یقینی طورپرہندوستانی حکومت سےعوامی طورپرسننا چاہوں گا کہ لوگوں کو فکرمند ہونےکی کوئی بات نہیں ہے۔
First published: Aug 03, 2019 03:36 PM IST