உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Drones in India: اب ڈرون اڑانا بن سکتا ہے آسان! نئے قوانین کے بارے میں جانیے تفصیلات

    ڈروان کی فائل فوٹو

    ڈروان کی فائل فوٹو

    پچھلے سال جب حکومت نے آزادانہ ڈرون قوانین کا اعلان کیا تھا، اس نے یہ لازمی قرار دیا تھا کہ ہندوستان میں DGCA سے منظور شدہ ڈرون ٹریننگ انسٹی ٹیوٹ سے تربیت حاصل کرنے کے بعد آپ کو اپنے آپ کو ریموٹ پائلٹ کے طور پر رجسٹر کرنے اور ’پائلٹ شناختی نمبر‘ حاصل کرنے کی ضرورت تھی۔

    • Share this:
      حکومت کی جانب سے ہندوستان میں ڈرونز (Drones in India) کی درآمد پر پابندی کے بعد وزارت شہری ہوا بازی نے ملک میں نئے ڈرون قوانین میں ایک اور بڑی تبدیلی کی ہے۔ درحقیقت اس نے لوگوں کے لیے غیر تجارتی مقاصد کے لیے قانونی طور پر چھوٹے ڈرون اڑانا آسان بنا دیا ہے۔

      حکومت نے اب ڈرون (ترمیمی) رولز 2022 (Drone (Amendment) Rules, 2022) کا اعلان کیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ ریموٹ پائلٹ سرٹیفکیٹ (پہلے اسے لائسنس کہا جاتا تھا) غیر تجارتی مقاصد کے لیے 2 کلوگرام تک کے چھوٹے سے درمیانے سائز کے ڈرون کو اڑانے کے لیے ضروری نہیں ہوگا۔

      اس کے علاوہ جو ڈرون اڑ رہے ہیں جن کا وزن 2 کلوگرام سے زیادہ ہے یا تجارتی مقاصد کے لیے انہیں قانونی طور پر اڑان بھرنے کے لیے ’ریموٹ پائلٹ لائسنس‘ لینے کی ضرورت نہیں ہے۔ اس کے بجائے انہیں صرف ریموٹ پائلٹ سرٹیفکیٹ کی ضرورت ہوتی ہے۔ نئے قانون کے مطابق یہ سرٹیفکیٹ ایک مجاز ریموٹ پائلٹ ٹریننگ آرگنائزیشن کسی بھی فرد کو جاری کر سکتا ہے۔ ملک میں ڈرون کے شوقین افراد کے لیے چیزوں کو آسان بنانے کے لیے یہ ایک بڑا قدم ہے۔ نیز اس سے ملک میں ڈرون کی ترسیل کو فروغ دینے کی امید ہے۔

      ریموٹ پائلٹ سرٹیفکیٹ بمقابلہ ریموٹ پائلٹ لائسنس: کیا فرق ہے؟

      اس سے پہلے کہ آپ الجھن میں پڑ جائیں، نوٹ کریں کہ ہندوستان میں ڈرونز کے زیادہ تر اصول صرف بڑے ڈرونز (2 کلوگرام وزن سے زیادہ) اور تجارتی مقاصد کے لیے ہیں۔ اگر آپ ہندوستان میں تفریح ​​کے لیے چھوٹا ڈرون اڑانا چاہتے ہیں تو آپ کو اس کے لیے کسی اجازت کی ضرورت نہیں ہے۔

      حکومت نے ڈرونز کو پانچ اقسام میں تقسیم کیا ہے۔

      نینو (Nano): 250 گرام سے کم یا اس کے برابر۔ (کوئی اجازت نامے کی ضرورت نہیں)

      مائیکرو (Micro): 250 گرام سے زیادہ اور 2 کلو سے کم یا اس کے برابر۔ (صرف غیر تجارتی استعمال کے لیے اجازت کی ضرورت نہیں ہے)

      اسمال (Small): 2 کلو سے بڑا اور 25 کلو سے کم یا اس کے برابر ہوتا ہے۔

      میڈیم (Medium): 25 کلوگرام سے زیادہ اور 150 کلوگرام سے کم یا اس کے برابر۔

      لارج (Large): 150 کلوگرام سے زیادہ کا ہوتا ہے۔

      تاہم نوٹ کریں کہ آپ کو یہ یقینی بنانا ہوگا کہ آپ کوئی بھی نینو ڈرون 50 فٹ (15m) اوپر گراؤنڈ لیول (AGL) سے آگے نہ اڑائیں۔ اس کے علاوہ آپ کو اجازت نامے کی ضرورت ہوگی، یہاں تک کہ نینو ڈرونز کے لیے بھی، اگر آپ کنٹرول شدہ فضائی حدود جیسے ہوائی اڈوں یا دیگر حساس تنصیبات میں پرواز کرتے ہیں۔ تو اس پر عمل ضروری ہے۔

      ہندوستان میں ڈرون قوانین کے بارے میں تازہ ترین اپ ڈیٹ کیا ہے؟

      پچھلے سال جب حکومت نے آزادانہ ڈرون قوانین کا اعلان کیا تھا، اس نے یہ لازمی قرار دیا تھا کہ ہندوستان میں DGCA سے منظور شدہ ڈرون ٹریننگ انسٹی ٹیوٹ سے تربیت حاصل کرنے کے بعد آپ کو اپنے آپ کو ریموٹ پائلٹ کے طور پر رجسٹر کرنے اور ’پائلٹ شناختی نمبر‘ حاصل کرنے کی ضرورت تھی۔ بغیر پائلٹ کے ہوائی جہاز آپریٹر پرمٹ (UAOP) ہندوستان میں باضابطہ طور پر ڈرون (250 گرام وزن تک نینو ماڈل کے علاوہ) اڑانے کے لیے ضروری تھا۔

      اب حکومت نے نرمی کو بڑھا دیا ہے جو کہ نینو ڈرونز کے لیے صرف 2 کلوگرام تک کے مائیکرو ڈرونز تک تھا، بشرطیکہ وہی مائیکرو ڈرون صرف غیر تجارتی استعمال کے لیے استعمال کیا جائے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: