ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

پلوامہ حملہ: مودی حکومت کا سخت قدم، کشمیری علاحدگی پسندوں سے واپس ہوگی سیکورٹی

سیکورٹی واپس لئے جانے والے علاحدگی پسندوں میں حریت کانفرنس کے لیڈرمیرواعظ عمرفاروق، عبدالغنی بھٹ، بلال لون، ہاشم قریشی اورشبیرشاہ شامل ہیں۔

  • Share this:
پلوامہ حملہ: مودی حکومت کا سخت قدم، کشمیری علاحدگی پسندوں سے واپس ہوگی سیکورٹی
کشمیرکے علاحدگی پسند لیڈر میر واعظ عمر فاروق اور یاسین ملک کی فائل فوٹو۔

جموں وکشمیر کے پلوامہ میں ہوئے دہشت گردانہ حملے کے بعد مرکزی حکومت نے بڑا قدم اٹھاتے ہوئے کشمیری علاحدگی پسندوں کوملی سیکورٹی واپس لے لینے کا فیصلہ کیا ہے۔ ان علاحدگی پسند لیڈروں میں حریت کانفرنس کے لیڈرمیرواعظ عمرفاروق، عبدالغنی بھٹ، بلال لون، ہاشم قریشی، شبیرشاہ شامل ہیں۔


حکومت کی طرف سے جاری احکامات کے مطابق ان علاحدگی پسندوں کومہیا کرائی گئی سیکورٹی اوردوسری گاڑیاں آج شام تک واپس لے لی جائیں گی۔ اس میں کہا گیا ہے کہ کسی بھی علاحدگی پسندوں کوسیکورٹی اہلکاراب کسی بھی صورت میں مہیا نہیں کرائی جائے گی۔ اگرانہیں حکومت کی طرف سے کوئی سہولت دی گئی ہے، تو وہ بھی فوری اثرسے واپس لے لی جائے گی۔


اس کے ساتھ ہی اب پولیس ہیڈ کوارٹرکسی دیگرعلاحدگی پسندوں کوملی سیکورٹی اوردیگر سہولیات کا جائزہ لےگی اوراسے بھی فوری طورپرواپس لے لیا جائے گا۔ واضح رہے کہ پلوامہ میں جمعرات کوسی آرپی ایف کی ٹکڑی پرکئےگئےفدائین حملے میں 40 جوان شہید ہوگئے تھے۔ اس حملےکولےکرملک میں غم اورغصے کا ماحول ہے۔ ہرطرف یہی مطالبہ کیا جارہا ہےکہ جوانوں کی شہادت کا بدلہ لیا جائے۔ مودی حکومت اس کےلئے ایکشن میں بھی نظرآرہی ہے۔ اس متعلق ہفتہ کوکل جماعتی میٹنگ کے بعد وزیرداخلہ راجناتھ سنگھ کی رہائش گاہ پرایک اہم میٹنگ ہوئی۔


ذرائع سے ملی اطلاعات کے مطابق نیشنل سیکورٹی ایڈوائزر(این ایس اے) اجیت ڈوبھال، ریسرچ اینڈ انالسس ونگ (آراے ڈبلیو) چیف انل دھسمانا اورانٹلی جنس بیورو(آئی بی) کے ایڈیشنل ڈائریکٹر، داخلہ سکریٹری عمرعبداللہ سمیت کئی بڑے افسراس میٹنگ میں موجود رہے۔ ذرائع کے مطابق اس میٹنگ میں پلوامہ حملے کا بدلہ لینے اورپاکستان کے خلاف سخت اقدامات کئے جانے کولے کراہم فیصلے لئے گئے ہیں۔

اس سے قبل ہفتہ کو ہی مہاراشٹر یوتمال میں بی جے پی کی ایک ریلی کو خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نریندرمودی نے ایک بارپھرسے پلوامہ حملے کا ذکرکرکے ملک کے عوام کو یقین دلایا۔ وزیراعظم نے کہا کہ 'میں نے کل (جمعہ) بھی کہا ہے اورآج بھی دوہرا رہا ہوں۔ پلوامہ کے شہیدوں کی قربانی رائیگاں نہیں جائے گی۔ دہشت گرد تنظیموں نے اوردہشت گردوں کے سرپرستوں نے جو گناہ کیا ہے، وہ چاہے جتنا چھپانے کی کوشش کریں، انہیں سزا ضروردی جائے گی'۔
First published: Feb 17, 2019 12:39 PM IST