உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Ayushman Bharat: نئے سال کا تحفہ! آیوشمان بھارت سے ملے گا مزید 2 کروڑ خاندانوں کو فائدہ

    Youtube Video

    نیوز 18 ڈاٹ کام کو معلوم ہوا ہے کہ مرکزی حکومت آیوشمان بھارت پردھان منتری جن آروگیہ یوجنا (AB PM-JAY) پروگرام کو 10.76 کروڑ کی حد تک بڑھا کر تقریباً دو کروڑ اضافی خاندانوں تک فائدہ پہنچانے کی سعی میں لگی ہوئی ہے۔

    • Share this:
      نیوز 18 ڈاٹ کام کو معلوم ہوا ہے کہ مرکزی حکومت آیوشمان بھارت پردھان منتری جن آروگیہ یوجنا (AB PM-JAY) پروگرام کو 10.76 کروڑ کی حد تک بڑھا کر تقریباً دو کروڑ اضافی خاندانوں تک فائدہ پہنچانے کی سعی میں لگی ہوئی ہے۔

      آیوشمان بھارت پردھان منتری جن آروگیہ یوجنا ہندوستان کی سب سے بڑی سرکاری مالی اعانت سے چلنے والی پبلک ہیلتھ انشورنس اسکیم ہے جو 10.76 کروڑ غریب اور کمزور خاندانوں (50 کروڑ سے زیادہ مستفیدین) کو ثانوی اور ٹریٹیری نگہداشت کے اسپتال میں داخلے کے لیے سالانہ 5 لاکھ روپے کا کور فراہم کرنا چاہتی ہے۔

      نیشنل ہیلتھ اتھارٹی، اس پروگرام کو نافذ کرنے والی اتھارٹی ہے اور اب تک فائدہ اٹھانے والوں کی شناخت صرف سماجی اقتصادی اور ذات کی مردم شماری کے ڈیٹا کی بنیاد پر کی گئی ہے۔ اس اسکیم کے نفاذ میں شامل ایک سینئر سرکاری اہلکار نے کہا کہ آیوشمان بھارت پروگرام کی کوریج کو تقریباً دو کروڑ اضافی خاندانوں تک بڑھانے کا منصوبہ مرکزی کابینہ کی منظوری سے مشروط ہے۔

      انہوں نے مزید کہا کہ پردھان منتری جیون جیوتی بیمہ یوجنا اور تحفظ بیمہ یوجنا کے ڈیٹا بیس اور پردھان منتری اجولا یوجنا پر بھی غور کیا جا سکتا ہے، حالانکہ بعد کے مستفیدین کو ایس ای سی سی ڈیٹا سے نکالا گیا ہے۔

      اعلیٰ سرکاری ذرائع نے کہا کہ نیشنل ہیلتھ اتھارٹی (NHA) سماجی اقتصادی اور ذات کی مردم شماری (SECC) کے علاوہ دیگر ڈیٹا بیس پر بھی غور شروع کر سکتی ہے تاکہ اسکیم کے ہدف سے فائدہ اٹھانے والوں کی شناخت اور ان تک پہنچ سکے۔

      اہلکار نے کہا کہ اضافی ڈیٹا بیس نہ صرف آیوشمان بھارت پردھان منتری جن آروگیہ یوجنا کے مقرر کردہ ہدف سے مستفید ہونے والوں کی موجودہ تعداد تک پہنچنے میں مدد کریں گے بلکہ اضافی مستفیدین تک پہنچنے میں بھی مدد کریں گے۔ نومبر 2021 تک این ایچ اے نے تقریباً 17 کروڑ آیوشمان بھارت کارڈ بنائے ہیں۔ جس میں 10.66 کروڑ PM-JAY کارڈز اور 5.85 کروڑ اسٹیٹ کارڈ شامل ہیں۔

      ذرائع نے بتایا کہ این ایچ اے دیگر ڈیٹا بیس جیسے کہ نیشنل فوڈ سیکیورٹی ایکٹ کو دیکھے گا، جس میں 80 کروڑ سے زیادہ لوگوں کا احاطہ کیا گیا ہے تاکہ یہ یقینی بنایا جا سکے کہ یہ اسکیم تمام ٹارگٹ استفادہ کنندگان تک پہنچ جائے۔ مذکورہ اہلکار نے بتایا کہ راشن کارڈ ہولڈرز کے علاوہ ہم پردھان منتری جن دھن یوجنا کے ڈیٹا بیس کو بھی دیکھیں گے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: