ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

جے این یو تنازع کا اثر، غداری ایکٹ میں ترمیم پر غور کر رہی ہے حکومت

نئی دہلی : جے این یو تنازع کے بعد سے غداری کے معاملہ پر پیدا ہوئے تنازع کے درمیان مرکزی حکومت اب غداری ایکٹ میں ترمیم پر غور کررہی ہے۔ منگل کو وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے لوک سبھا میں بتایا کہ لاء کمیشن غداری ایکٹ کا جائزہ لے رہا ہے اور اس میں ضروری ترمیم کی جا سکتی ہے۔

  • Pradesh18
  • Last Updated: Mar 01, 2016 07:02 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
جے این یو تنازع کا اثر، غداری ایکٹ میں ترمیم پر غور کر رہی ہے حکومت
نئی دہلی : جے این یو تنازع کے بعد سے غداری کے معاملہ پر پیدا ہوئے تنازع کے درمیان مرکزی حکومت اب غداری ایکٹ میں ترمیم پر غور کررہی ہے۔ منگل کو وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے لوک سبھا میں بتایا کہ لاء کمیشن غداری ایکٹ کا جائزہ لے رہا ہے اور اس میں ضروری ترمیم کی جا سکتی ہے۔

نئی دہلی : جے این یو تنازع کے بعد سے غداری کے معاملہ پر پیدا ہوئے تنازع کے درمیان مرکزی حکومت اب غداری ایکٹ میں ترمیم پر غور کررہی ہے۔ منگل کو وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے لوک سبھا میں بتایا کہ لاء کمیشن غداری ایکٹ کا جائزہ لے رہا ہے اور اس میں ضروری ترمیم کی جا سکتی ہے۔

لوک سبھا ممبر پارلیمنٹ ایم ڈی راجیش نے لوک سبھا میں سوال اٹھاتے ہوئے کہا تھا کہ غداری ایکٹ کا ملک بھر میں پولیس منمانے طور پر استعمال کر رہی ہے۔ کیا حکومت اس کا نوٹس لے گی؟ ۔ اس کے جواب میں وزیر داخلہ هربھائي چودھری نے کہا کہ وزارت قانون نے لاء کمیشن سے غداری ایکٹ اور تعزیرات ہند پر غور کرنے کے لئے کہا تھا۔

خیال رہے کہ غداری ایکٹ سے متعلق سپریم کورٹ کی پہلے ہی وضاحت آچکی ہے کہ صرف نعرے بازی اس الزام کو ثابت کرنے کے لئے کافی نہیں ہے۔ اس کے لئے تشدد کے لئے اکسایا جانا بھی ضروری ہے۔

واضح رہے کہ جے این یو کے طلبہ کنہیا کمار، عمر خالد اور انربان بھٹاچاريہ کو کیمپس میں ملک مخالف سرگرمیوں میں مبینہ ملوث ہونے کی بنا پر گرفتار کیا گیا ہے۔ کانگریس کے جنرل سکریٹری سے لے کر سی پی ایم کے جنرل سکریٹری سیتارام یچوری تک متعدد لوگوں نے طلبہ کی نعرے بازی کو بغاوت تسلیم کرنے کے حکومت کے فیصلے پر سوال اٹھایا تھا۔ اسی کے بعد سے غداری کی دوبارہ تشریح پر بحث ہو رہی ہے۔

First published: Mar 01, 2016 07:02 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading