ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

جی ایس ٹی کے لئے پارلیمنٹ کا سرمائی اجلاس جلد طلب کرگي حکومت:وینکیا

نئی دہلی: پارلیمانی امور کے مرکزی وزیر ایم ووینکيا نائیڈو نے آج کہا کہ گڈس اینڈ سروس ٹیکس(جی ایس ٹی)سے متعلق آئینی ترمیم بل سمیت کچھ اہم بلوں کو پاس کرانے کے لئے پارلیمنٹ کا سرمائی اجلاس قبل از وقت بلایا جا سکتا ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Sep 10, 2015 08:33 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
جی ایس ٹی کے لئے پارلیمنٹ کا سرمائی اجلاس جلد طلب کرگي حکومت:وینکیا
نئی دہلی: پارلیمانی امور کے مرکزی وزیر ایم ووینکيا نائیڈو نے آج کہا کہ گڈس اینڈ سروس ٹیکس(جی ایس ٹی)سے متعلق آئینی ترمیم بل سمیت کچھ اہم بلوں کو پاس کرانے کے لئے پارلیمنٹ کا سرمائی اجلاس قبل از وقت بلایا جا سکتا ہے۔

نئی دہلی: پارلیمانی امور کے مرکزی وزیر ایم ووینکيا نائیڈو نے آج کہا کہ گڈس اینڈ سروس ٹیکس(جی ایس ٹی)سے متعلق آئینی ترمیم بل سمیت کچھ اہم بلوں کو پاس کرانے کے لئے پارلیمنٹ کا سرمائی اجلاس قبل از وقت بلایا جا سکتا ہے۔


مسٹر نائیڈو نے یہاں نامہ نگاروں سے کہا کہ پارلیمنٹ کا سرمائی اجلاس وقت سے پہلے بلائے جانے کا امکان ہے۔ انہوں نے اشارہ کیا کہ پارلیمنٹ کا یہ سیشن بہار اسمبلی انتخابات کے فورا بعد بلایا جا سکتا ہے۔ انہوں نے کہا،بہار انتخابات کے بعد جی ایس ٹی بل کے پاس ہونے کی ہمیں امید ہے۔ ہم اس کے لئے کوشش کریں گے۔


حکومت کے اعلی سطحی ذرائع کے مطابق بہار اسمبلی انتخابات کاعمل 08 نومبر کو ختم ہو جائے گا اور پارلیمنٹ کا سرمائی اجلاس 16 نومبر سے بلایا جا سکتا ہے۔مسٹر نائیڈو کا یہ بیان حکومت کی طرف سے پارلیمنٹ کے مانسون سیشن کے اختتام کی سفارش صدر کو بھیجنے کے فیصلے کے بعد آیا ہے۔ مرکزی کابینہ کی سیاسی امور کی کمیٹی نے کل اس سلسلے میں فیصلہ کیا تھا۔ حکومت کا کہنا ہے کہ کانگریس پارلیمنٹ کی کارروائی میں رکاوٹ ڈالٹی رہی ہے جس کی وجہ سے جی ایس ٹی سمیت اہم بل منظور نہیں ہو پا رہے ہیں۔


واضح رہے کہ کانگریس نے للت مودی کیس میں وزیر خارجہ سشما سوراج اور راجستھان کی وزیر اعلی وسندھرا راجے اور وياپم گھوٹالے میں مدھیہ پردیش کے وزیر اعلی شیوراج سنگھ چوہان کا اہم کردارہونے کا الزام ​​لگاتے ہوئے پارلیمنٹ کے مانسون اجلاس میں بھاری ہنگامہ کیا جس کی وجہ سے پارلیمنٹ کی کارروائی نہیں چل پائی تھی ۔


ذرائع کا کہنا ہے کہ موسم سرما سیشن کے دوران کانگریس اپنی حکمت عملی میں تبدیلی کرے گی اور مانسون اجلاس کی طرح رکاوٹ نہیں ڈالے گی۔حکومت کا ارادہ جی ایس ٹی کویکم اپریل 2016 سے نافذ کرنے کا ہے اور اس کے لئے طویل قانون سازی کے عمل سے گزرنا پڑے گا۔

First published: Sep 10, 2015 08:33 PM IST