ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

درگاہوں اور خانقاہوں سے وابستہ افراد اور مساجد کے امام بھی خدام الحجاج کے زمرے میں ہوں گے شامل

اترپردیش کے ریاستی وزیر برائے حج محسن رضا نے کہا ہے کہ آئندہ برس صرف سرکاری ملازمین ہی خدام الحجاج کے زمرے میں نہیں جائیں گے ، بلکہ درگاہوں اور خانقاہوں سے وابستہ افراد اور مساجد کے امام بھی یہ سعادت حاصل کرسکیں گے۔

  • ETV
  • Last Updated: Aug 04, 2017 12:00 AM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
درگاہوں اور خانقاہوں سے وابستہ افراد اور مساجد کے امام بھی خدام الحجاج کے زمرے میں ہوں گے شامل
اتر پردیش کے اقلیتی بہبود کے وزیر مملکت محسن رضا: فائل فوٹو۔

لکھنؤ: اترپردیش کے ریاستی وزیر برائے حج محسن رضا نے کہا ہے کہ آئندہ برس صرف سرکاری ملازمین ہی خدام الحجاج کے زمرے میں نہیں جائیں گے ، بلکہ درگاہوں اور خانقاہوں سے وابستہ افراد اور مساجد کے امام بھی یہ سعادت حاصل کرسکیں گے۔ خیال رہے کہ کئی برس کے بعد اس مرتبہ اترپردیش سے خادموں کے زمرے میں بھی 150 افراد کو حج پر روانہ کیا گیا ہے ، لیکن اس زمرے میں سب سرکاری ملازمین واہلکار ہیں ، جس کی وجہ سے کچھ لوگوں کو یہ شکایت ہے کہ خدام کی حیثیت سے ان غریب اماموں کو بھیجا جانا چاہئے ، جو غربت کے سبب یہ فریضہ انجام نہیں دے پا رہے ہیں ۔

ادھر یوگی کے وزیر محسن رضا بھی اس بارے میں سنجیدہ نظر آئے اور انہوں نے اس ضمن میں مرکزی وزیر مختار عباس نقوی سے بات بھی کی ہے ۔ امید یہی کی جانی چاہئے کہ آئندہ برس کچھ غریب ائمہ اورمجابروں کو بھی یہ سعادت حاصل ہوسکے گی ۔

قابل ذکر ہے کہ اتر پردیش کی راجدھانی لکھنؤ کے سروجنی نگر میں واقع علی میاں ندوی میموریل حج ہاؤس سےعازمین کی روانگی کا سلسلہ جاری ہے اور یہ آئندہ آٹھ اگست تک برقرار رہے گا۔ حالانکہ سفر اور دشواریوں کا چولی دامن کا ساتھ ہے اور کہیں نہ کہیں کچھ پریشانیاں مسافروں کو پیش آ ہی جاتی ہیں۔ لیکن سرکاری سطح پر اتر پردیش حج کمیٹی نے عازمین کے لئے جو انتظامات کئے ہیں ، ان کو لے کر محسن رضا کافی مطمئن نظر آتے ہیں ۔

First published: Aug 04, 2017 12:00 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading