ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

ریلوے نے بدلا ٹکٹ کا ضابطہ، ہاف ٹکٹ پر بچوں کو نہیں ملے گی سیٹ

نئی دہلی۔ انڈین ریلوے میں ہر روز منصوبہ بندی کی سطح پر نئے فیصلے کئے جا رہے ہیں۔ اب اسی سمت میں آگے بڑھتے ہوئے ریلوے نے ہاف ٹکٹ کا تصور بدل دیا ہے۔

  • IBN Khabar
  • Last Updated: Mar 26, 2016 12:21 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
ریلوے نے بدلا ٹکٹ کا ضابطہ، ہاف ٹکٹ پر بچوں کو نہیں ملے گی سیٹ
نئی دہلی۔ انڈین ریلوے میں ہر روز منصوبہ بندی کی سطح پر نئے فیصلے کئے جا رہے ہیں۔ اب اسی سمت میں آگے بڑھتے ہوئے ریلوے نے ہاف ٹکٹ کا تصور بدل دیا ہے۔

نئی دہلی۔ انڈین ریلوے میں ہر روز منصوبہ بندی کی سطح پر نئے فیصلے کئے جا رہے ہیں۔ اب اسی سمت میں آگے بڑھتے ہوئے ریلوے نے ہاف ٹکٹ کا تصور بدل دیا ہے۔ ابھی تک ریلوے میں ہاف ٹکٹ لے کر بچوں کے لئے پوری سیٹ حاصل کر لینے والے عمل کو اب ختم کر دیا جائے گا۔ ہاف ٹکٹ پر بچے اب والدین یا بڑوں کی سیٹ کو ہی شئیر کریں گے۔


انڈین ریلوے کے اس قدم سے ہر سال 2 کروڑ مسافروں کو كنفرم سیٹ مل پائے گی۔ ریلوے کو اس سے ہر سال 525 کروڑ روپے کی کمائی بھی ہوگی۔ ریلوے میں ابھی 5 سے 12 سال کے بچوں کا ہاف ٹکٹ لگتا ہے اور انہیں پوری سیٹ ملتی ہے۔ اس منصوبہ کے عمل میں آنے کے بعد اس عمر کے بچوں کے لئے اگر سیٹ مانگی جائے گی تو ان کا کرایہ بھی پورا لگے گا۔


ہاف ٹکٹ کا سلسلہ اب بھی چلتا رہے گا لیکن اس میں پوری ایک نشست ملنے کا التزام ختم ہو جائے گا۔ یہ نیا اصول 22 اپریل سے لاگو ہوگا۔ 5 سال سے کم عمر کے بچوں کو لے کر ٹکٹ کے عمل میں کسی طرح کی تبدیلی نہیں کی گئی ہے۔ 5 سال سے کم عمر کے بچے بغیر سیٹ کے ٹرین میں مفت سفر کرتے رہیں گے۔


ایسی رپورٹیں ہیں کہ سال 2014-15 میں 5-12 سال کے 2.11 کروڑ بچوں نے ہاف ٹکٹ پر ریلوے میں سفر کیا ہے۔ ریلوے نے غیر ریزرو ٹکٹوں کے زمرے میں بچوں کے کرایہ میں کوئی تبدیلی نہیں کی ہے۔ ریلوے اب ریزرویشن فارم بھی بدلے گا جس سے مسافر بچوں کے لئے فل سیٹ کے لئے الگ سے درخواست دے سکیں۔
First published: Mar 26, 2016 12:19 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading