ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

پاکستان سے واپس آئےحامد اںصاری کی ماں نے سشما سوراج سے کہی یہ بڑی بات

وزیرخارجہ سے مل کرحامد انصاری اوران کی ماں فوزیہ دونوں جذباتی ہوگئے۔ سشما سوراج حامد سے گلے ملنے کے بعد ماں فوزیہ کی طرف بڑھیں، تووہ جذباتی ہوگئیں اورکہا ’’میرا ہندستان مہان، میری میڈم مہان، سب میڈم نے ہی کیا"۔

  • Share this:
پاکستان سے واپس آئےحامد اںصاری کی ماں نے سشما سوراج سے کہی یہ بڑی بات
پاکستان سے 6 سال بعد لوٹے حامد نہال انصاری اوران کی ماں نے وزیرخارجہ سشما سوراج سے ملاقات کرکے شکریہ ادا کیا۔

نئی دہلی: ممبئی کےرہنے والے نوجوان حامد نہال انصاری نے پاکستان کی قید سےآزادہونے کے بعد وطن واپس آنے پر اپنی ماں کےساتھ آج یہاں وزیرخارجہ سشما سوراج سے ملاقات کی۔ وزارت خارجہ کے ترجمان رویش کمار نے یہاں بتایا کہ 6 سال بعد پاکستان کی قید سے آزاد ہونے کے بعد وطن واپس آنے کے بعد حامد نہال انصاری کا وزیرخارجہ سشما سوراج نے آج دہلی میں استقبال کیا۔

حامد نہال انصاری کل پاکستان سے اٹاری ۔ واگہہ سرحد سے ہندستان پہنچے تھے، جہاں ان کا خاندان انتظار کررہا تھا۔ وہ امرتسر سے دہلی پہنچے اورسہ پہر وزیرخارجہ سشماسوراج سے ملنےآئے تھے۔ وزیرخارجہ سے مل کر حامد اوران کی ماں فوزیہ دونوں جذباتی ہوگئے۔ سشما سوراج حامد سے گلے ملنے کے بعد ماں فوزیہ کی طرف بڑھیں، تو وہ جذباتی ہوگئیں اور کہا ’’میرا ہندستان مہان، میری میڈم مہان، سب میڈم نے ہی کیا"۔


فوزیہ کی یہ باتیں سن کروزیرخارجہ نے پیار سے ان کے گال پر ہاتھ  پھیرا۔ اس پرحامد کی آنکھیں نم ہوگئیں۔ سوراج نے کہا "براوقت ہوتا ہے بیٹا، براوقت ہوتاہے"۔ 43 سال کے حامد 6 سال قبل سوشل میڈیا پر دوست بنی ایک لڑکی سے ملنے کی تمنا لے کرافغانستان کے راستہ غیرقانونی طورسے پاکستان میں داخل ہوگئے تھے، جنھیں 2012 میں وہاں کی خفیہ ایجنسیوں نے پکڑ لیا تھا۔




بعد میں حامد انصاری فوجی عدالت نے 15دسمبرکو تین سال قید کی سزاسنائی تھی۔ حامد کو پشاورکی سنٹرل جیل میں رکھا گیا تھا۔ وہ 15 دسمبر 2018 کورہا ہوگئے تھے، لیکن اس دن قانونی دستاویزات نہ ہونے کی وجہ سے ہندستان واپس نہیں آسکے۔ گزشتہ جمعرات کو پشاورہائی کورٹ نے پاکستان کی وفاقی حکومت کو حامد حامد کووطن بھیجنے کے لئے ایک ماہ کی مہلت دی تھی۔

(نیوزایجنسی یواین آئی اردو کے ان پٹ کے ساتھ)
First published: Dec 19, 2018 08:40 PM IST