உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ہاتھرس کیس: سی بی آئی نے دائر کی چارج شیٹ، چاروں ملزموں پر ریپ اور قتتل کا الزام

    یوپی کے ہاتھرس میں اجتماعی عصمت دری اور قتل معاملہ

    یوپی کے ہاتھرس میں اجتماعی عصمت دری اور قتل معاملہ

    یوپی کے ہاتھرس میں اجتماعی عصمت دری اور قتل معاملے (Hathras Gangrape and Murder Case) کی جانچ کر رہی سی بی آئی (CBI) نے جمعے کو معاملے کی چارج شیٹ داخل کر دی ہے۔

    • Share this:
      یوپی کے ہاتھرس میں اجتماعی عصمت دری اور قتل معاملے (Hathras Gangrape and Murder Case) کی جانچ کر رہی سی بی آئی  (CBI)  نے جمعے کو معاملے کی چارج شیٹ داخل کر دی ہے۔ سی بی آئی نے چارج شیٹ میں اس معاملے میں پکڑے گئے سبھی چاروں ملزموں کو ریپ اور قتل کا الزام مانا ہے۔ بتادیں اس معاملے چاروں ملزم سندیپ، لو کش، روی اور رامو پر گاؤں کی ایک دلت لڑکی کے ریپ اور قتل کا الزام ہے۔

      یوپی کے ہاتھرس میں اجتماعی عصمت دری اور قتل معاملے کی جانچ کر رہی سی بی آئی جمعے چارج شیٹ داخل کر دی ہے۔ یوگی حکومت نے یہ کیس سی بی آئی کو جانچ کیلئے سونپا تھا جس کی سی بی آئی گزشتہ دو مہینے سے جانچ میں مصروف تھی۔ ادھر اس معاملے کی جانچ کر رہی سی بی آئی جانچ متاثرہ کے بھائی کو فارینسک سائیکولوجسٹ ٹیسٹ کیلئے گجرات لیکر جائے گی۔ یہاں اس کا سائیکولوجیکل اسیسمنٹ کرایا جائے گا۔ ہاتھرس معاملے میں متاثرہ کے بھائی کی طرف سے ہی ایف آئی آر درج کرائی گئی تھی۔

      بتادیں کہ اس سے پہلے الٰہ آباد ہائی کورٹ کی لکھنؤ بینچ نے ہاتھرس معاملے میں اپنا حکم محفوظ رکھتے ہوئے جانچ بنائے رکھنے رکھنے کیلئے ضلعی مجسٹریٹ (ڈی ایم) پروین کمار لشکار کے خلاف حکومت کے ذریعے کوئی کارروائی نہیں کئے جانے پر فکر ظاہر کی تھی۔ عدالت نے معاملے کی اگلی سنوائی کی تاریخ مقرر کرتے ہوئے اس دن سی بی آئی سے اس معاملے میں اپنی جانچ کی اسٹیٹس رپورٹ پیش کرنے کو بھی کہا تھا۔
      Published by:sana Naeem
      First published: