ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

ہاتھرس واقعہ: متاثرہ کنبے سے ملنے جا رہے راہل۔ پرینکا، ضلع کی سرحد سیل، دفعہ 144 نافذ

اترپردیش کے ہاتھرس میں دلت بیٹی کی مبینہ عصمت دری کے بعد حیوانیت کے معاملہ میں سوشل میڈیا سے لے کر سڑک تک ناراضگی دیکھنے کو مل رہی ہے۔ ساتھ ہی اس معاملہ میں سیاست بھی شروع ہو گئی۔ اسی ضمن میں جمعرات کو کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی اور یوپی کی انچارج پرینکا گاندھی متاثرہ کنبے سے ملنے بلگاڑی گاوں جا رہے ہیں۔

  • Share this:
ہاتھرس واقعہ: متاثرہ کنبے سے ملنے جا رہے راہل۔ پرینکا، ضلع کی سرحد سیل، دفعہ 144 نافذ
راہل گاندھی اور پرینکا گاندھی کی فائل فوٹو: فوٹو، پی ٹی آئی

ہاتھرس۔ اترپردیش (Uttar Pradesh) کے ہاتھرس میں دلت بیٹی کی مبینہ عصمت دری کے بعد حیوانیت کے معاملہ میں سوشل میڈیا سے لے کر سڑک تک ناراضگی دیکھنے کو مل رہی ہے۔ ساتھ ہی اس معاملہ میں سیاست بھی شروع ہو گئی۔ اسی ضمن میں جمعرات کو کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی اور یوپی کی انچارج پرینکا گاندھی (Priyanka Gandhi) متاثرہ کنبے سے ملنے بلگاڑی گاوں جا رہے ہیں۔ پرینکا اور راہل گاندھی کے شہر میں آنے کی بات مقامی کانگریسی لیڈر بھی کہہ رہے ہیں۔ حالانکہ، اس بیچ پولیس کو بھی الرٹ کر دیا گیا ہے۔ اطلاعات کے مطابق، ہاتھرس میں دفعہ 144 نافذ کر دیا گیا ہے۔ وہیں، دہلی۔ نوئیڈا سرحد سیل کر دیا گیا ہے۔


مل رہی جانکاری کے مطابق، راہل اور پرینکا کے آنے کی اطلاع پر یوپی پولیس الرٹ پر ہے۔ کہا جا رہا ہے کہ دونوں کو ڈی این ڈی پر ہی روکا جا سکتا ہے۔



ایس پی بولے۔ شہر میں گھسنے نہیں دیں گے

ایس پی وکرانت ویر نے بتایا کہ انہیں راہل گاندھی اور پرینکا گاندھی کے آنے کی ان کے پروٹوکول کے تحت کوئی جانکاری نہیں ملی ہے۔ سرحدیں سیل ہیں۔ کسی کو بھی ہاتھرس کی طرف نہیں آنے دیا جائے گا۔ کیونکہ سیاسی افراد کی وجہ سے بھیڑ بڑھ سکتی ہے۔ قانون وانتظام کی صورت حال کو بگاڑنے کے اندیشوں کے پیش نظر انہیں سرحدوں پر ہی روکا جائے گا۔

اس سے پہلے کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی اور جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی واڈرا نے اترپردیش حکومت پر لاء اینڈ آرڈر کو سنبھالنے میں ناکام رہنے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ ریاست میں جنگل راج جیسی صورتحال پیدا ہو گئی ہے اور ریاستی حکومت بیٹیوں کو تحفظ دینے میں ناکام ہے۔ راہل گاندھی نے جمعرات کو یہاں جاری ایک بیان میں کہا،’اترپردیش کے جنگل راج میں بیٹیوں پر ظلم اور حکومت کی سینہ زوری جاری ہے۔ کبھی جیتے جی احترام نہ کیا اور آخری رسوم کا وقار بھی چھین لیا۔ بی جے پی کا نعرہ ’بیٹی بچاؤ نہیں، سچائی چھپاؤ۔حکومت بچاؤ‘ ہے۔


پرینکا واڈرا نے کہا،’ہاتھرس جیسا لرزہ خیز واقعہ بلرامپور میں بھی پیش آیا۔ لڑکی کا ریپ کرکے پیر اور کمر توڑ دی گئی۔ اعظم گڑھ، باغپت، بلند شہر میں بچیوں سے درندگی ہوئی۔ اترپردیش میں پھیلے جنگل راج کی کوئی حد نہیں۔ مارکیٹنگ، تقاریر سے لاء اینڈ آرڈر نہیں چلتا۔ یہ وزیر اعلیٰ کی جوابدہی کا وقت ہے۔ عوام کو جواب چاہییے‘۔
Published by: Nadeem Ahmad
First published: Oct 01, 2020 12:50 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading