ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

امر سنگھ نے پوچھا : ملائم کے ساتھ داغدار تھے تو اکھلیش کے خیمہ میں آتے ہی کس طرح بے داغ ہوگئے؟

امر سنگھ نے کہا کہ سماج وادی پارٹی کے رکن اسمبلی اور ممبران پارلیمنٹ جب تک ملائم سنگھ یادو کے ساتھ تھے، تب تک وہ داغدار تھے، انہی لوگوں نے جب خیمہ بدل لیا تو وہ پاک صاف ہو گئے۔

  • Pradesh18
  • Last Updated: Jan 06, 2017 08:40 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
امر سنگھ نے پوچھا : ملائم کے ساتھ داغدار تھے تو اکھلیش کے خیمہ میں آتے ہی کس طرح بے داغ ہوگئے؟
امر سنگھ نے کہا کہ سماج وادی پارٹی کے رکن اسمبلی اور ممبران پارلیمنٹ جب تک ملائم سنگھ یادو کے ساتھ تھے، تب تک وہ داغدار تھے، انہی لوگوں نے جب خیمہ بدل لیا تو وہ پاک صاف ہو گئے۔

لکھنو : سماج وادی پارٹی کے جنرل سکریٹری اور راجیہ سبھا ممبر پارلیمنٹ امر سنگھ نے وزیر اعلی اکھلیش یادو کا نام لئے بغیر حملہ بولا ہے۔ امر سنگھ نے کہا کہ سماج وادی پارٹی کے رکن اسمبلی اور ممبران پارلیمنٹ جب تک ملائم سنگھ یادو کے ساتھ تھے، تب تک وہ داغدار تھے، انہی لوگوں نے جب خیمہ بدل لیا تو وہ پاک صاف ہو گئے۔ یہ بے حد عجیب دلیل ہے۔ انہوں نے کہا کہ انصاری بھائی جیسے داغدار لوگ اکھلیش خیمے میں جا کر بے داغ ہو گئے۔

امر سنگھ نے یہ بھی کہا کہ وہ پچھلے دروازے کی سیاست نہیں کرتے۔ انہوں نے کہا کہ وہ کبھی بھی اکھلیش یادو کے راستے کا روڑا نہیں بنے ۔ ملائم اور اکھلیش خیمے کے الگ الگ الیکشن لڑنے کے سوال پر امر سنگھ نے کہا کہ مجھے یہ سمجھ میں نہیں آتا ، بھلا کوئی اپنوں سے کیسے لڑ سکتا ہے، میں دل سے چاہتا ہوں کہ باپ بیٹے ایک ہو جائیں۔

خیال رہے ہو کہ وزیر اعلی اکھلیش یادو مسلسل الزام لگاتے رہے ہیں کہ امر سنگھ کی وجہ سے ہی چچا شوپال سنگھ یادو اور والد ملائم سنگھ یادو سے ان کا تنازع ہوا ہے۔ پارٹی اکھلیش یادو اور ملائم سنگھ یادو کے دو خیموں میں بٹ کر رہ گئی ہے۔ اکھلیش مسلسل ملائم سنگھ یادو سے امر سنگھ کو پارٹی سے نکالنے کا مطالبہ کر رہے ہیں۔

First published: Jan 06, 2017 08:40 PM IST