உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جموں۔کشمیر کے پلوامہ میں سیکورٹی فورسز نے ملیٹنٹوں کے منصوبے کو بنایا ناکام ، ٹلا بڑا حادثہ

    تلاشی کے دوران سڑک کنارے نصب آئی ای ڈی برآمد ہوئی۔ آئی ای ڈی کا وزن تقریباً 5 کلو گرام تھا اور اسے ایک کنٹینر میں جمع کیا گیا تھا۔ پولیس اور فوج کی بم ڈسپوزل ٹیم نے آئی ای ڈی کو کنٹرول بم سے موقع پر ہی تباہ کر دیا

    تلاشی کے دوران سڑک کنارے نصب آئی ای ڈی برآمد ہوئی۔ آئی ای ڈی کا وزن تقریباً 5 کلو گرام تھا اور اسے ایک کنٹینر میں جمع کیا گیا تھا۔ پولیس اور فوج کی بم ڈسپوزل ٹیم نے آئی ای ڈی کو کنٹرول بم سے موقع پر ہی تباہ کر دیا

    تلاشی کے دوران سڑک کنارے نصب آئی ای ڈی برآمد ہوئی۔ آئی ای ڈی کا وزن تقریباً 5 کلو گرام تھا اور اسے ایک کنٹینر میں جمع کیا گیا تھا۔ پولیس اور فوج کی بم ڈسپوزل ٹیم نے آئی ای ڈی کو کنٹرول بم سے موقع پر ہی تباہ کر دیا

    • Share this:
    جموں کشمیر کے پلوامہ سیکورٹی فورسزکی مشترکہ کاروایی میں برودی سرنگ کو ناکارہ بنایا گیا ہے ۔ تفصیلات کے مطابق ۔ جنوبی کشمیر کے ضلع پلوامہ میں نیوہ سرینگر رابطہ سڑک پر وانپورہ گاؤں میں ملی ٹنٹوں کی جانب سے نصب کی گئ بارودی سرنگ کا پتہ چلتے ہی  فوج کی 50RR اور سی آر پی ایف 183 بٹالین کے علاوہ پلوامہ پولیس کی مشترکہ پارٹی نے علاقے کا محاصرہ کرکے قبرستان کے نزدیک زیر زمین نصب کی گئ بارودی سرنگ کو پایا جس کے بعد بمب ناکارہ بنانے والے اسکواڈ کو طلب کرکے آئی ای ڈی کو ناکارہ بنایا گیا۔

    پولیس کے ایک پریس بیان کے مطابق سیکورٹی فورسز کی بر وقت کاروائی سے ایک بڑا سانحہ 5 کلو گرام آئی ای ڈی کو تباہ کرکے ٹل گیا۔ پولیس کے مطابق ایک مخصوص انٹیلی جنس پر عمل کرتے ہوئے کہ دہشت گردوں نے وانپورہ میں نیوہ سرینگر روڈ پر ایک آئی ای ڈی نصب کیا ہے، پلوامہ پولیس، 50 آر آر اور 183 بٹالیں سی آر پی ایف کے ذریعے  مشترکہ طور پر تلاشی آپریشن شروع کیا گیا تھا۔

    تلاشی کے دوران سڑک کنارے نصب آئی ای ڈی برآمد ہوئی۔ آئی ای ڈی کا وزن تقریباً 5 کلو گرام تھا اور اسے ایک کنٹینر میں جمع کیا گیا تھا۔ پولیس اور فوج کی بم ڈسپوزل ٹیم نے آئی ای ڈی کو کنٹرول بم سے موقع پر ہی تباہ کر دیا۔ اس سلسلے میں مقدمہ درج کر کے تفتیش شروع کر دی گئی ہے۔ چند مشتبہ افراد کو پوچھ گچھ کے لیے اٹھایا گیا ہے۔ پولیس کی بروقت کارروائی سے بڑا سانحہ ٹل گیا۔

    قومی، بین الاقوامی اور جموں وکشمیر کی تازہ ترین خبروں کےعلاوہ تعلیم و روزگار اور بزنس کی خبروں کے لیے نیوز18 اردو کو ٹویٹر اور فیس بک پر فالو کریں ۔
    Published by:Sana Naeem
    First published: