ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

اروناچل سرحد پر برہموس میزائل تعینات کرے گا ہندوستان، چین کا سخت رد عمل

چینی کمیونسٹ پارٹی کے ترجمان اخبار پیپلز ڈیلی نے کہا ہے کہ چین سے لگی سرحد پر برہموس میزائل کی تعیناتی سے علاقے میں استحکام پر منفی اثر پڑے گا۔

  • IBN Khabar
  • Last Updated: Aug 23, 2016 03:31 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
اروناچل سرحد پر برہموس میزائل تعینات کرے گا ہندوستان، چین کا سخت رد عمل
چینی کمیونسٹ پارٹی کے ترجمان اخبار پیپلز ڈیلی نے کہا ہے کہ چین سے لگی سرحد پر برہموس میزائل کی تعیناتی سے علاقے میں استحکام پر منفی اثر پڑے گا۔

نئی دہلی۔  ہندوستان کی سب سے زیادہ خطرناک سپرسونک کروز میزائل برہموس کی اروناچل پردیش میں مجوزہ تعیناتی نے چین کو تشویش میں ڈال دیا ہے۔ اسے لے کر چین نے سخت رد عمل ظاہر کیا ہے۔ اس نے اسے تصادم کا نظریہ مانا ہے۔


چینی کمیونسٹ پارٹی کے ترجمان اخبار پیپلز ڈیلی نے کہا ہے کہ چین سے لگی سرحد پر اس کی تعیناتی سے علاقے میں استحکام پر منفی اثر پڑے گا۔ اس کا یہ بھی ماننا ہے کہ ہندوستان کے اس اقدام کے پیچھے تصادم کا نظریہ ہے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق دفاعی ذرائع کا کہنا ہے کہ چین کے اعتراض کے باوجود سیکورٹی کے پیش نظر برہموس کی تعیناتی چینی سرحد پر کی جائے گی۔ ہندوستان اپنی سلامتی کو اور پختہ کرنا چاہتا ہے۔ اسی کو ذہن میں رکھتے ہوئے سرحد پر ہتھیار تعینات کر رہا ہے۔


تاہم اس معاملے میں چین ہندوستان سے آگے ہے۔ بات سرحد پر ریلوے لائن کی ہو یا پھر پکی سڑک کی، چین نے اپنے بنیادی ڈھانچے کو اس قدر مضبوط کر لیا ہے کہ ہندوستان بری طرح پچھڑ گیا ہے۔ اروناچل میں برہموس کی تعیناتی مجوزہ ہی ہے، لیکن چین نے سخت رخ دکھا دیا ہے۔ فی الحال حکومت نے بس اس بات کی منظوری دی ہے کہ اروناچل میں برہموس کی چوتھی ریجمنٹ کی تعیناتی کی جائے گی۔ تقریباً 4300 کروڑ کی لاگت سے ریجمنٹ میں تقریبا 100 میزائلیں، پانچ موبائل لانچر اور ایک موبائل کمان پوسٹ تعینات ہوگی۔ اس میں تقریباً سال بھر کا وقت لگے گا۔

First published: Aug 23, 2016 03:29 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading