ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

ریلوے کا فلیکسی کرایہ سسٹم آج سے نافذ ، حکومت نے کہا : عام آدمیوں پر نہیں پڑے گا اثر

ریلوے بورڈ کی طرف سے اعلان شدہ نئے فلیکسی کرایہ سسٹم آج سے نافذ ہوگيا، جس کے تحت اب مسافروں کو راجدھانی، دورنتو اور شتابدی ٹرینوں میں سفر کرنے کے لئے زیادہ پیسے خرچ کرنے پڑیں گے۔

  • UNI
  • Last Updated: Sep 09, 2016 07:59 PM IST
  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
ریلوے کا فلیکسی کرایہ سسٹم آج سے نافذ ، حکومت نے کہا : عام آدمیوں پر نہیں پڑے گا اثر
ریلوے بورڈ کی طرف سے اعلان شدہ نئے فلیکسی کرایہ سسٹم آج سے نافذ ہوگيا، جس کے تحت اب مسافروں کو راجدھانی، دورنتو اور شتابدی ٹرینوں میں سفر کرنے کے لئے زیادہ پیسے خرچ کرنے پڑیں گے۔

نئی دہلی : ریلوے بورڈ کی طرف سے اعلان شدہ نئے فلیکسی کرایہ سسٹم آج سے نافذ ہوگيا، جس کے تحت اب مسافروں کو راجدھانی، دورنتو اور شتابدی ٹرینوں میں سفر کرنے کے لئے زیادہ پیسے خرچ کرنے پڑیں گے۔ نئے سسٹم کے تحت راجدھانی، دورنتو اور شتابدی گاڑیوں میں ٹکٹوں کی قیمت میں ہر 10 فیصد فروخت کے ساتھ ہی 10 فیصد اضافہ ہوتا جائے گا۔ جس کی مختلف طبقوں بشمول اپوزیشن پارٹیوں نے سخت نکتہ چینی کی ہے۔تاہم، وزارت ریلوے نے آج واضح کیا کہ یہ سسٹم فی الحال تجرباتی ہے اور اس کا اطلاق صرف تین طرح کی پریمیم ٹرینوں پر ہوگا۔

ریلوے بورڈ کے چیئر مین اے کے متل نے نامہ نگاروں کو بتایا کہ 12 ہزار 50 ٹرینوں میں سے صرف 142 ٹرینوں میں فلیکسی کرایہ سسٹم شروع کیا گیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ریلوے کو فی کلومیٹر 73 پیسے خرچ ہوتا ہے، لیکن اس میں مسافروں سے صرف 37 پیسے فی کلومیٹر خرچ وصول کیا جاتا ہے، جس کا مطلب ہے کہ سفر کے صرف 56 فیصد اخراجات وصول ہوتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ نئے سسٹم کا اثر صرف اعلی طبقہ کے 0.15 فیصد مسافروں پر پڑے گا، جبکہ روزانہ ریلوے میں سفر کرنے والے مسافروں کی تعداد 2 کروڑ 30 لاکھ ہے۔ اس طرح نچلے طبقہ کے مسافرین فلیکسی کرایہ سسٹم سے متاثر نہيں ہوں گے۔ دریں اثناء، تمام اپوزیشن پارٹیوں نے فلیکسی کرایہ سسٹم کے نفاذ کی مذمت کرتے ہوئے اس کو واپس لینے کا مطالبہ کیا۔

First published: Sep 09, 2016 03:36 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading