ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

شرمناک! خواتین کے سامنے پولیس آفیسر کا انتہائی گندی اور گھنونی حرکت کرتے ہوئے ویڈیو وائرل، نوکری سے برخاست

بھٹنی پولیس اسٹیشن کے ایس ایچ او (SHO) بھیشم پال سنگھ کو تھانہ میں خاتون شکایت کنندہ کے سامنے مشت زنی کرتے دیکھا گیا۔ اس دوران لڑکی نے اس کا ویڈیو بنا لیا۔ اس دوران لڑکی نے اس کا ویڈیو بنا لیا اور اپنے دیگر ممبران کو دکھایا جس کے بعد پڑوس کے رہنے والے ایک شخص نے ویڈیو کو فارورڈ کردیا اور وہ سوشل میڈیا پر وائرل ہوگیا۔وہیں ایس پی دیوریا نے کہا ہے کہ "ان کے خلاف ایف آئی آر درج کی گئی ہے اور انہیں معطل کردیا گیا ہے۔ کارروائی کی جارہی ہے"۔

  • Share this:
شرمناک! خواتین کے سامنے پولیس آفیسر کا انتہائی گندی اور گھنونی حرکت کرتے ہوئے ویڈیو وائرل، نوکری سے برخاست
بھٹنی پولیس اسٹیشن کے ایس ایچ او (SHO) بھیشم پال سنگھ کو تھانہ میں خاتون شکایت کنندہ کے سامنے مشت زنی کرتے دیکھا گیا۔

خواتین کے سامنے انتہائی گندی اور گنونی حرکت کرنے والے دیوریا کے بھٹنی تھانے کے سابق پولیس آفیسر بھیشم پال (Bhishmpal Singh Yadav) کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔ ساتھ ہی وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ(CM Yogi Adityanath) نے سخت ایکشن لیتے ہوئے دروغہ کو پولیس سروس سے برخاست (Terminate) بھی کردیا ہے۔ بتادیں کہ لڑکی کی تحریر پر مقدمہ درج ہونے کے بعد سے ہی انسپیکٹر بیشم پال سنگھ یادو فرار چل رہا تھا۔ اس کی گرفتاری کیلئے 25 ہزار کا انعام کا بھی اعلان کیا گیا تھا۔ بدھ کو ایس او جی کی ٹیم کے ذڑیعے ہریا جنپد بستی کے پاس بھیشم پال سنگھ کو گرفتار کرلیاگیا۔ بھٹنی پولیس اسٹیشن کے ایس ایچ او (SHO) بھیشم پال سنگھ کو تھانہ میں خاتون شکایت کنندہ کے سامنے مشت زنی کرتے دیکھا گیا۔ وہیں ایس پی دیوریا نے کہا ہے کہ "ان کے خلاف ایف آئی آر درج کی گئی ہے اور انہیں معطل کردیا گیا ہے۔ کارروائی کی جارہی ہے"۔

غور طلب ہے خواتین کے سامنے تھانے میں مشت زنی (masturbates) کرنے کا ویڈیو وائرل ہونے کے بعد پولیس آفیسر (Police Officer) کو سسپینڈ کردیا تھا۔ ساتھ ہی لڑکی کی تحریر پر تھانہ بھٹنی میں آئی پی سی کی دفعہ 354(ک)/509/166 مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ اس کے بعد سے ہی معطلانسپکٹر بھیم شپال سنگھ فرار تھا۔ جس کے بعد اس کے اوپر 25,000 روپئے کا انعام کا اعلان کیا گیا تھا۔ . ساتھ ہی اس معطل انسپکٹر کو گورکھپور کے ڈپٹی انسپکٹر جنرل آف پولیس نے فوری طور پر پولیس سروس سے برخاست کردیا ہے۔

پونے تین منٹ کا ہے ویڈیو۔

پونے تین منٹ کے وائرل ویڈیو میں نظر آرہا ہے کہ دو خواتین شکایت لیکر تھانے پہنچی ہیں۔ ایک خاتون انسپیکٹر کی بائیں طرف بیٹھی ہے۔ اندازہ لگایا جارہا ہے کہ وہ سابق انسپیکٹر کی جان پہچان کی رہ ہوگی۔ وہیں ایک خاتون سامنے بیٹھی ہے۔ وائرل ویڈیو میں انسپیکٹر بھیشم پال یادو بائیں طرف بیٹھی خاتون کو گندے اشارے کرتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے۔

متاثرہ کی تحریری شکایت پر بھٹنی تھانے میں بھیشم لال یادو کے خلاف دفعہ 354(ک)/509/166 کے تحت کارروائی شروع کردی گئی ہے۔ لڑکی کی تحریر کے مطابق 22 کی دوپہر کو میں اپنی ماں کے ساتھ اراضی تنازعہ کے ایک معاملے میں تھانہ گئی تھی۔ اس وقت بھیشم لال یادو اپنے دفتر میں بیٹھے تھے۔ وہ اور اس کی ماں زمینی تنازعہ کے بارے میں انچارج انسپکٹر کو بتارہی تھیں جس کے بعد بھیشم لال یادو کے ذریعے بیٹھنے کیلئے کہنے پر دونوں وہاں رکھی کرسی پر بیٹھ گئی۔ لڑکی کا الزام ہے کہ اراضی تنازعہ کے سلسلے میں بات کرتے۔کرتے۔ انچارج انسپکٹر گندی اور گھنونی حرکت کرنے لگے۔ اس دوران لڑکی نے اس کا ویڈیو بنا لیا اور اپنے دیگر ممبران کو دکھایا جس کے بعد پڑوس کے رہنے والے ایک شخص نے ویڈیو کو فارورڈ کردیا اور وہ سوشل میڈیا پر وائرل ہوگیا۔

First published: Jul 02, 2020 07:56 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading