உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    علم دین کا حصول ہر مسلمان پرفرض: اقرا انٹرنیشنل اسکول میں منعقدہ افطارتقریب کے بعد مولانا اصغرعلی کا سامعین سے خطاب

    نئی دہلی۔ جنوبی دہلی کی معروف دانش گاہ اقرا انٹرنیشنل اسکول میں ایک روح پرور دعوت افطارو طعام کا اہتمام کیا گیا جس میں علاقہ جیت پوراور جامعہ نگر کے سینکڑوں علمی، سماجی اورسیاسی افراد نے شرکت کی۔

    نئی دہلی۔ جنوبی دہلی کی معروف دانش گاہ اقرا انٹرنیشنل اسکول میں ایک روح پرور دعوت افطارو طعام کا اہتمام کیا گیا جس میں علاقہ جیت پوراور جامعہ نگر کے سینکڑوں علمی، سماجی اورسیاسی افراد نے شرکت کی۔

    نئی دہلی۔ جنوبی دہلی کی معروف دانش گاہ اقرا انٹرنیشنل اسکول میں ایک روح پرور دعوت افطارو طعام کا اہتمام کیا گیا جس میں علاقہ جیت پوراور جامعہ نگر کے سینکڑوں علمی، سماجی اورسیاسی افراد نے شرکت کی۔

    • Pradesh18
    • Last Updated :
    • Share this:

      نئی دہلی۔ جنوبی دہلی کی معروف دانش گاہ اقرا انٹرنیشنل اسکول میں ایک روح پرور دعوت افطارو طعام کا اہتمام کیا گیا جس میں علاقہ جیت پوراور جامعہ نگر کے سینکڑوں علمی، سماجی اورسیاسی افراد نے شرکت کی۔  بعد نماز مغرب اقرا انٹرنیشنل اسکول کے مؤسس و بانی مولانا اصغر علی امام مہدی سلفی نے دعوت افطار و طعام میں تشریف لائے لوگوں سے  خطاب کیا ۔ آپ نے اپنے مختصر خطاب میں سب سے پہلے اسکول کی دعوت پر تشریف لانے والے سبھی مہمانان کا شکریہ ادا کیا اور کہاکہ ہم مسلمانوں کے لئے  ضروری ہے کہ ہم اپنے آپ کو علم سے آراستہ کریں اور سب سے افضل اور پیارے نبی محمد صلی اللہ علیہ وسلم کے اسوہ اور سنت کو ہرکام میں اپنائیں کیونکہ اللہ جل شأنہ نے انس و جن کے لئے آپ کو سب سے بڑا اور آخری نمونہ اوراسوہ بنا کر مبعوث کیا اور انسانیت اور ساری مخلوق پر بہت بڑا انعام اور احسان فرمایا۔


      مولانا اصغر علی سلفی نے اپنی بات کو جاری رکھتے ہوئے کہا کہ سنت کی اتباع دنیا میں خوشحال زندگی اور آخرت میں سرخروئی اور کامیابی کی ضامن  ہے۔اس وجہ سے ہم سبھی مسلمانوں کو یہ بات سمجھ لینی چاہئے کہ شریعت اسلامیہ کے دو ہی اصول ہیں : ایک کتاب اللہ اور دوسرا سنت رسول صلی اللہ علیہ وسلم ،انسان کی ہر طرح کی کامیابی کا راز انہی دونوں چیزوں پر منحصر ہے۔


                  اس موقع پر مولانا نے حاضرین کو فقراء و مساکین کا تعاون کرنے ، ان کے قیام و طعام کا نظم کرنے اور آپسی بھائی چارہ کو عام کرنے کی تلقین کی اور ان لوگوں کو مبارک باد دی جنہوں نے اس مبارک مہینے کی روح کو سمجھا اور اس کے مطابق ہر طرح کے کارخیر میں حصہ لے کر اس مہینہ کے بے پایاں اجرو ثواب اور اس کی رحمتوں اور برکتوں کو اپنے دامن میں سمیٹا۔ مولانا نے مزید کہا کہ اس وقت دنیا کے بہت سارے ممالک میں مسلمانوں کا امن و سکون برباد ہوگیا ہے، آرام دہ زندگی بسر کرنے والے لاکھوں لوگ سڑکوں پر آسمان کے نیچے زندگی گزار رہے ہیں۔ہمیں ان کے لئے کم ازکم دعا کرنی چاہئے کہ اللہ تعالیٰ ان کی آزمائش کو دور کردے۔


      iftar


                  اس موقع پر اسکول کے ڈائرکٹر مولانا محمد اظہرمدنی نے یہ اعلان کیا کہ اقرا گرلس انٹرنیشنل اسکول جیت پور کی جامع مسجد سلام میں عیدالفطر کی نمازحسب معمول  صبح آٹھ  بجے ادا کی جائے گی۔  پریس ریلیز کے مطابق مولانا موصوف نے اس بات پر خوشی کا اظہار کیا کہ اقرا گرلس انٹرنیشنل اسکول اپنے مشن میں کامیاب ہے اور اس معاملے میں اسے امتیازی شان حاصل ہے کہ اس میں ماہر اساتذہ و معلمات کی نگرانی میں سی بی ایس سی نصاب تعلیم کے ساتھ ساتھ قرآن مجید، عربی اور اسلامیات کی تعلیم دی جاتی ہے۔ سبھی مہمانوں نے ذمہ داران اسکول کو مبارک باد پیش کی اوراس بات کی ستائش کی کہ انہوں نے جیت پور جیسے انتہائی پچھڑے علاقہ میں بھی اس معیار کا اسکول قائم کرنے کی ہمت کی اور اسے عملی جامہ بھی پہنایا۔


                  پریس ریلیز کے مطابق اس افطار پارٹی میں جن مشہور لوگوں نے شرکت فرمائی ان میں اسکول کے ڈائرکٹر مولانا محمد اظہر مدنی، اسکول کے کوآرڈینیٹرمولانا محمد رئیس فیضی، اسکول کے شعبہ تعلیم کے رکن مولانا محمد فضل الرحمن ندوی، اسکول کے عربی استاذ مولانا سعید الرحمن سنابلی،دہلی یونیورسٹی کے شعبہ عربی کے صدر ڈاکٹر ولی اختر ندوی ، مولانا عرفان شاکر صاحب،مشہور صحافی ندیم احمد ، معین خاں سہارا فوٹوگرافر، ڈاکٹر فیصل، ڈاکٹروسیم باری ، مولانا ابراراصلاحی اور اسکول میں زیر تعلیم بچوں کے سرپرستوں کی ایک اچھی تعداد ہے ۔

      First published: