ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

الہ آباد: رام مندر کی تعمیر میں نہیں کیا جائے گا لوہے کا استعمال

نئی دہلی میں ہونے والے اجلاس کے سلسلہ میں رام مندر نرمان ٹرسٹ کے جنرل سکریٹری چمپت رائے نے گذشتہ 3؍ اکتوبر کو الہ آباد میں واقع وی ایچ پی کاشی پرانت کے دفتر میں تنظیم کے سینئر عہدے داروں کے ساتھ اہم میٹنگ کی تھی۔ اس میٹنگ میں ایودھیا میں رام مندر کی تعمیر کی تیاریوں کے علاوہ لو جہاد، متھرا عیدگاہ اور بنارس کی گیان واپی مسجد کے معاملے پر بھی غور کیا گیا تھا۔ لیکن بعد میں چمپت رائے نے میڈیا کے سامنے خود کو رام مندر کی تعمیر کے منصوبے تک ہی محدود رکھنے کی بات کہی تھی۔

  • Share this:
الہ آباد: رام مندر کی تعمیر میں نہیں کیا جائے گا لوہے کا استعمال
رام مندر کی تعمیر میں نہیں کیا جائے گا لوہے کا استعمال

الہ آباد۔ آئندہ ماہ 10 اور 11 نومبر کو نئی دہلی میں ہونے والے سادھو سنتوں کے نمائندہ  اجلاس میں کئی اہم فیصلے لئے جا سکتے ہیں۔ وشو ہندو پریشد کی دعوت پرمنعقد ہونے والے اس اجلاس میں 300 سادھو سنتوں کے شامل ہونے کا امکان ہے۔ وی ایچ پی کے اس اجلاس میں بنارس کی گیان واپی مسجد اور متھرا کی عیدگاہ کے معاملے میں بھی آئندہ کے لائحہ عمل  پرغور کیا جائے گا ۔ گرچہ وشو ہندو پریشد نے کاشی اور متھرا کے معاملے میں اپنے منصوبے کا ابھی تک کھل کراعلان نہیں کیا ہے، تاہم متھرا کی عید گاہ اور بنارس کی گیان واپی مسجد کا معاملہ وی ایچ پی کے ایجنڈا میں ہمیشہ سر فہرست رہا ہے۔


نئی دہلی میں ہونے والے اجلاس کے سلسلہ میں رام مندر نرمان ٹرسٹ کے جنرل سکریٹری چمپت رائے نے گذشتہ 3؍ اکتوبر کو الہ آباد میں واقع وی ایچ پی کاشی پرانت کے دفتر میں تنظیم کے سینئر عہدے داروں کے ساتھ اہم میٹنگ کی تھی۔ اس میٹنگ میں ایودھیا میں رام مندر کی تعمیر کی تیاریوں کے علاوہ لو جہاد، متھرا عیدگاہ اور بنارس کی گیان واپی مسجد کے معاملے پر بھی غور کیا گیا تھا۔ لیکن  بعد میں چمپت رائے نے میڈیا کے سامنے خود کو رام مندر کی تعمیر کے منصوبے تک  ہی محدود رکھنے کی بات کہی تھی۔


وشو ہندو پریشد کے ذرائع  کے مطابق، ایودھیا میں رام مندر کی تعمیر کی سبھی تیاریاں مکمل ہو چکی ہیں۔ ایودھیا میں مندر کی تعمیر قدیم ہندوستانی طرز تعمیر کے مطابق کی جائے گی۔ مندر کی تعمیر میں لوہے کا کہیں بھی استعمال نہیں کیا جائے گا۔ مندر کی بنیادیں سو فٹ گہری اور  ایک میٹر چوڑی بنائی جائیں گی۔ اسی طرح مجوزہ رام  مندر 1200 ستونوں پر مشتمل ہوگا ۔ مندر کی  تعمیر کا ٹھیکہ معروف کثیر القومی تعمیراتی کمپنی لارسن ٹربو کمپنی کو دیا گیا ہے۔ کمپنی کے کام میں چنئی کے انڈین انسٹی ٹیوٹ آف ٹکنالوجی اور رڑکی کے سینٹرل بلڈنگ ریسرچ انسٹی ٹیوٹ بھی معاونت کریں گے۔


وی ایچ پی ذرائع کے مطابق رام مندر کی تعمیر کے لئے وی ایچ پی نے فنڈ جمع کرنے کے لئے ایک بڑے منصوبے کا خاکہ تیار کیا ہے۔ 10 اور 11 نومبر کو دہلی میں ہونے والے سادھو سنتوں کے اجلاس میں اس منصوبے کو حتمی شکل دی جائے گی۔ منصوبے کے مطابق وشو ہندو پریشد ملک کے  گیارہ کروڑ ہندو خاندانوں سے براہ راست رابطہ قائم کرے گی۔ اس طرح ملک کی تقریباً نصف ہندو آبادی تک وی ایچ پی نے اپنی رسائی کا دعویٰ کیا ہے۔ وی ایچ پی کے ذرائع کے مطابق اس اجلاس میں  آئندہ کے لائحہ عمل  کے بارے میں بھی کئی اہم فیصلے لئے جائیں گے۔
Published by: Nadeem Ahmad
First published: Oct 15, 2020 05:53 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading