اپنا ضلع منتخب کریں۔

    جیک ڈورسی نےکیا ایلون مسک کوچیلنج! کہاوہ اب ہرچیزکوبنائیں عوامی، تب مسک نےدیایہ جواب

    جیک ڈورسی اور ایلون مسک

    جیک ڈورسی اور ایلون مسک

    یہ بات قابل ذکر ہے کہ اکتوبر 2020 میں امریکی صدارتی انتخابات سے عین قبل ٹوئٹر نے نیویارک پوسٹ کے ایک مضمون پر پابندی لگا دی تھی جس میں یوکرین میں امریکی صدر جو بائیڈن کے بیٹے ہنٹر بائیڈن کی سرگرمیوں کے بارے میں غیر تصدیق شدہ دعوے تھے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • USA
    • Share this:
      ٹویٹر کے سابق سی ای او جیک ڈورسی نے نئے مالک ایلون مسک کو چیلنج کیا ہے کہ وہ ٹویٹر فائلز کے گرد سنسنی پیدا کرنا بند کر دیں اور ہر چیز کو بغیر فلٹر کیے ’عوامی‘ کر دیں۔ مسک نے گزشتہ ہفتے دی ٹویٹر فائلز (Twitter Files) کی پہلی قسط جاری کی تھی۔ جس کے بارے میں کہا جارہا ہے کہ وہ متنازعہ فیصلے میں پلیٹ فارم پر صارفین کو آگاہ کرنا چاہتے ہیں۔ انھوں نے اپنے فالوورس کو ٹویٹر فائلز کا ایپیسوڈ 2 ظاہر کرنے کے لیے بھی کہا ہے لیکن یہ کہتے ہوئے اس میں تاخیر کی کہ اسے مزید وقت درکار ہوگا۔

      اطلاعات کے مطابق دی ٹویٹر فائلز کے ایپی سوڈ 1 نے امریکی صدر جو بائیڈن کے بیٹے ہنٹر بائیڈن کے لیپ ٹاپ کی کہانی کو پلیٹ فارم پر دبانے میں مدد دی ہے۔ جس میں کمپنی کی قانونی مشیر بھارتی نژاد سابق سربراہ وجے گڈے کو ملوث پایا گیا۔ یہ بتائے بغیر کہ اس نے انہیں کیسے حاصل کیا؟ آزاد صحافی اور مصنف میٹ تائبی نے گزشتہ ویک اینڈ پر مسک کی توثیق کے ساتھ پلیٹ فارم پر ٹویٹر فائلز کو شیئر کیا تھا۔

      یہ بات قابل ذکر ہے کہ اکتوبر 2020 میں امریکی صدارتی انتخابات سے عین قبل ٹوئٹر نے نیویارک پوسٹ کے ایک مضمون پر پابندی لگا دی تھی جس میں یوکرین میں امریکی صدر جو بائیڈن کے بیٹے ہنٹر بائیڈن کی سرگرمیوں کے بارے میں غیر تصدیق شدہ دعوے تھے۔ ٹویٹر نے کہا تھا کہ اس مواد میں کمپنی کی ہیکڈ میٹریلز پالیسی کی خلاف ورزی کی گئی ہے۔

      یہ بھی پڑھیں: 

      اس کے بعد ڈورسی نے ٹویٹ کیا تھا کہ مزید سیاق و سباق فراہم کیے بغیر مواد کو مسدود کرنا ناقابل قبول ہے۔ نومبر 2020 میں امریکی کانگریس کے سامنے اس واقعہ کے بارے میں بھی ان سے پوچھ گچھ کی گئی۔

      ڈورسی نے ٹویٹر پر مسک کو چیلنج کیا کہ اگر مقصد اعتماد پیدا کرنا اور شفافیت لانا ہے، تو کیوں نہ صرف ہر چیز کو بغیر فلٹر کے جاری کریں اور لوگوں کو خود فیصلہ کرنے دیں۔ موجودہ اور مستقبل کے اقدامات کے بارے میں صارفین نے فیصلہ کرسکتے ہیں۔ مسک نے جمعرات کو جواب دیا کہ سب سے اہم ڈیٹا چھپایا گیا تھا اور کچھ کو حذف کر دیا گیا ہو گا، لیکن ہمیں جو کچھ ملے گا اسے جاری کر دیا جائے گا۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: