ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

جامعہ تشدد معاملہ: لائبریری میں طلبہ پر ڈنڈے برساتی دکھی پولیس، وائرل ویڈیو سے یونیورسیٹی نے کیا کنارا

جامعہ کوآرڈنیشن کمیٹی نے 49 سیکنڈ کا ایک ویڈیو جاری کیا ہے جس میں پولیس کے جوان لائبریری میں گھس کر وہاں پڑھائی کر رہے طلبہ پر لاٹھیاں برساتے نظر آ رہے ہیں۔

  • Share this:
جامعہ تشدد معاملہ: لائبریری میں طلبہ پر ڈنڈے برساتی دکھی پولیس، وائرل ویڈیو سے یونیورسیٹی نے کیا کنارا
اہم خبر: طلبہ پر ڈنڈے برساتی نظر آئی پولیس، ویڈیو سے جامعہ ملیہ اسلامیہ نے کیا کنارا

نئی دہلی۔ شہریت ترمیمی قانون 2019 (CAA 2019)  پاس ہونے کے فورا بعد جامعہ ملیہ اسلامیہ (Jamia Millia )کے طلبہ نے اس کی مخالفت میں احتجاج کیا۔ مخالفت میں نکالا گیا مارچ جلد ہی پرتشدد احتجاج میں تبدیل ہو گیا۔ اس کے بعد دلی پولیس (Delhi Police) نے طلبہ پر جم کر لاٹھی چلائی۔ اس وقت پولیس پر الزام لگا کہ اس نے لائبریری میں بیٹھے طلبہ کے ساتھ بربریت کی۔ لائبریری میں گھس کر اس نے توڑ پھوڑ کی اور طلبہ کی جم کر پٹائی کی۔


پولیس نے اپنی صفائی میں کہا کہ طلبہ پر ہلکی طاقت استعمال کی گئی تھی۔ اب اس واقعہ کے دو ماہ بعد جامعہ کوآرڈنیشن کمیٹی نے 49 سیکنڈ کا ایک ویڈیو جاری کیا ہے جس میں پولیس کے جوان لائبریری میں گھس کر وہاں پڑھائی کر رہے طلبہ پر لاٹھیاں برساتے نظر آ رہے ہیں۔ اس ویڈیو کے وائرل ہونے کے بعد دلی کے خصوصی پولیس کمشنر (جرائم) پرویر رنجن نے کہا کہ اس ویڈیو کی جانچ کا حکم دے دیا گیا ہے۔ وہیں، جامعہ ملیہ اسلامیہ نے واضح کیا ہے کہ یہ ویڈیو ان کی طرف سے جاری نہیں کیا گیا ہے۔



ویڈیو میں واضح طور پر نظر آ رہا ہے کہ اولڈ ریڈنگ ہال (Old Reading Hall) میں کچھ طلبہ بیٹھے ہوئے پڑھائی کر رہے ہیں۔ ایک طالب علم پولیس کو دیکھ کر میز کے نیچے چھپ جاتا ہے۔ ایک طالب علم پولیس سے بچنے کے لئے ادھر ادھر بھاگتا ہوا نظر آ رہا ہے۔ جامعہ کوآرڈنیشن کمیٹی (Jamia Coordination Committee) نے ویڈیو جاری کرنے کے ساتھ ہی پولیس کے خلاف کارروائی کی مانگ بھی کی ہے۔ سوشل میڈیا پر ویڈیو پوسٹ کرنے کے ساتھ ہی لکھا گیا ہے’’ اس ویڈیو کو دیکھئے اور سوچئے کہ دلی پولیس نے جامعہ کے طلبہ پر کس طرح کی بربریت کی ہے۔ لائبریری میں پڑھائی کر رہے طلبہ پر بغیر کسی غلطی کے ان پر حملہ کیا جا رہا ہے‘‘۔
First published: Feb 16, 2020 06:28 PM IST