உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جامعہ ملیہ اسلامیہ کی وائس چانسلر نجمہ اختر نے وزیراعظم مودی سے میڈیکل کالج کے لئے طلب کی مدد

    جامعہ ملیہ اسلامیہ کی وائس چانسلر نجمہ اخترکی وزیراعظم مودی سے ملاقات۔

    جامعہ ملیہ اسلامیہ کی وائس چانسلر نجمہ اخترکی وزیراعظم مودی سے ملاقات۔

    جامعہ ملیہ اسلامیہ اس سال اپنے 100 سال مکمل کرنے کا جشن منائے گا۔ وزیراعظم نریندرمودی نے سو سالہ جشن منانے کے لئے الگ سے فنڈدینے کا بھروسہ دلایا ہے۔

    • Share this:
      نءی دہلی: جامعہ ملیہ اسلامیہ کی وائس چانسلر نجمہ اخترنے وزیراعظم نریندرمودی سے ملاقات کرکے جامعہ ملیہ اسلامیہ میں میڈیکل کالج شروع کرنے کے لئے مدد مانگی ہے۔ نجمہ اختر کے مطابق وزیراعظم مودی نے ہر طرح کی مدد کی یقین دہانی کرائی ہے۔ واضح رہے کہ جامعہ ملیہ اسلامیہ اس سال اپنے 100 سال مکمل کرنے کا جشن منائے گا۔
      اطلاعات کے مطابق وزیراعظم نریندرمودی نے سو سالہ جشن منانے کے لئے الگ سے فنڈدینے کا بھروسہ دلایا ہے۔ دہلی حکومت اور اتر پردیش حکومت کے درمیان جامعہ ملیہ اسلامیہ کے میڈیکل کالج کو لے کر زمین کا معاملہ دونوں حکومت کے درمیان تنازعہ میں ہے۔
      اس سلسلے میں دہلی ہائی کورٹ  دہلی حکومت اور اتر پردیش حکومت کو آپس کی بات چیت سے معاملہ حل کرنے کی نصیحت کر چکا ہے۔

      گزشتہ پانچ سالوں سے اس مسئلے کا حل نہیں نکل سکا ہے. وزیراعظم نریندرمودی کی مدد سے جامعہ ملیہ اسلامیہ کے میڈیکل کالج کا خواب شرمندہ تعبیر ہوسکتا ہے۔ واضح رہے کہ نریندر مودی کی قیادت والی بی جے پی حکومت کے ذریعہ نجمہ اخترکو جامعہ ملیہ اسلامیہ کا وائس چانسلرنامزد کیا گیا تھا۔ وہ جامعہ ملیہ کی پہلی خاتون وائس چانسلر ہیں۔
      First published: