ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

آئی ایس آئی ایس کے ہم خیال ہونے کے الزام میں دہلی سے گرفتارملزمین میں سے دوکوعدالتی تحویل میں بھیجا گیا

بقیہ تین ملزمین کو مزید تین دنون کے لیئے پولس تحویل میں دیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ جمعیۃ علماء ہند نے قانونی امداد فراہم کی ہے۔

  • Share this:
  • author image
    NEWS18-Urdu
آئی ایس آئی ایس کے ہم خیال ہونے کے الزام میں دہلی سے گرفتارملزمین میں سے دوکوعدالتی تحویل میں بھیجا گیا
این آئی اے نے کی گرفتاری: فائل فوٹو

نئی دہلی: ممنوعہ تنظیم داعش (آئی ایس آئی ایس) کے ہم خیال ہونے اورملک میں دہشت گردانہ کارروائیاں انجام دینے کے الزمات کے تحت دہلی و اطراف سے گرفتارکئے گئے ملزمین سے آج عدالت نے ایک جانب جہاں دوملزمین کوعدالتی تحویل میں بھیج دیا وہیں دیگر تین ملزمین کومزید تین دنوں کے لئے پولس تحویل میں بھیجا۔

خصوصی جج راکیش سیال نے ملزمین کوزبیرملک، راشد ظفراورمحمد یونس کی پولس تحویل میں تین دنوں کا اضافہ کردیا جبکہ ملزمین زید ملک محمد اعظم کو عدالتی تحویل میں بھیجے جانے کے احکامات جار ی کئے۔


اسی درمیان ملزم کے اہل خانہ کی درخواسست پر ملزم کو قانونی امداد فراہم کرنے والی تنظیم جمعیۃ علماء ہند کی جانب سے ملزمین کے دفاع میں مقررکردہ وکیل ایم ایس خان نے عدالت میں عرضداشت داخل کرتے ہو ئے عدالت سے گزارش کی کہ تمام ملزمین کوعدالتی تحویل میں بھیجا جائے کیوں ملزمین سے تفتیش مکمل ہوچکی ہے اورمزید تفتیش کے نام پر پولس ان کی تحویل حاصل کرنا چاہتی ہے۔

حالانکہ سرکاری وکیل نے تمام ملزمین کو ایک ہفتہ مزید پولس تحویل میں دیئے جانے کا مطالبہ کیا تھا، لیکن ایم ایس خان کی مخالفت کے بعد عدالت نے تین ملزمین پولس تحویل اور دوملزمین کوعدالتی تحویل میں بھیج دیا۔

واضح رہے کہ گذشتہ دنوں ملزمین مفتی محمد سہیل، انس یونس، راشد ظفر، سعید احمد، رئیس احمد، زبیر ملک، زید ملک،ثاقب افتخار، محمد ارشاد اور محمد اعظم جن کا تعلق امروہہ، سیلم پور، جعفرآباد و دیگرعلاقوں سے ہے اوران کے قبضوں سے پولس نے دیشی راکٹ لانچر، آلارم ٹائمرگھڑی وغیرہ ضبط کرنے کا دعوی کیا اورمزید کہا کہ ملزمین "حرکت الحرب اسلام" نامی تنظیم کے رکن ہیں، جوداعش کی مقامی شاخ کا نام ہے۔ متذکرہ ملزمین کے اہل خانہ کی درخواست پرجمعیۃ علماء ہندکے صدرحضرت مولانا سید ارشد مدنی نے ملزمین کو قانونی امداد فراہم کرنے کا فیصلہ کیا تھا۔
First published: Jan 07, 2019 10:07 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading