ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں۔کشمیر: اٹھارہ گھنٹے کے بعد پلوامہ آپریشن اختتام پذیر، دہشت گرد فورسز کا محاصرہ توڑنے میں کامیاب 

تفصیلات کے مُطابق ۔ ٹیکنہ پلوامہ کے میوہ باغات میں گُذشتہ روز کو بعد دوپہر فوج کی 55RR نے سی آر پی ایف کے اعلاوہ پولیس کے ساتھ مل کر میوہ باغات میں ملی ٹنٹوں کی موجود گی پر آپریشن شروع کیا تھا۔

  • Share this:
جموں۔کشمیر: اٹھارہ گھنٹے کے بعد پلوامہ آپریشن اختتام پذیر، دہشت گرد فورسز کا محاصرہ توڑنے میں کامیاب 
فائل فوٹو

پلوامہ: گزشتہ 18 گھنٹے سے چلا ضلع پلوامہ کے ٹیکنہ علاقے میں فورسز کا آپریشن اختتام پذیر ہوا۔ دہشت گرد فورسز کا محاصرہ توڑنے میں کامیاب ہوئے۔ تاہم سیکورٹی فورسز نے ضلع پلوامہ کے سیتھر علاقے میں ایک ناکے کے دوران تلاشی کاروائی میں لشکر طیبہ سے وابستہ دہشت گروں کو اُس دو قریبی ساتھیوں سمیت گرفتار کرلیا گیا ہے ۔ تفصیلات کے مُطابق ۔ ٹیکنہ پلوامہ کے میوہ باغات میں گُذشتہ روز کو بعد دوپہر فوج کی 55RR نے سی آر پی ایف کے اعلاوہ پولیس کے ساتھ مل کر میوہ باغات میں ملی ٹنٹوں کی موجود گی پر آپریشن شروع کیا تھا۔


تلاشی کاروائی کے دوران دہشت گردوں اور سیکورٹی فورسس کے درمیان کافی دھیر تک گولیوں کا تبادلہ بھی ہوا۔ ٹینکہ اور اس کے ملحقہ دیہات کے میوہ باغات میں تقریبا 18 گھنٹے تک آپریشن چلا۔ تاہم ملیٹنٹ محاصرہ ٹوڑنے میں کامیاب ہوئے ۔ جہاں ٹیکنہ میں دہشت گرد محاصرے سے فرار ہوئے۔ وہیں گُذشتہ شام کو ہی ضلع پلوامہ کے سیتھر علاقے میں سیکورٹی فورسز نے دہشت گردوں کے خلاف کامیابی حاصل کی۔


سیتھر علاقے میں ایک ناکے کے دوران 50RR اور پولیس کے اعلاوہ سی آر پی ایف کی مشترکہ ناکہ تلاشی میں لشکر کا ایک دہشت گرد کو اُس کے دو ساتھیوں سمیت گرفتار کرلیا گیا۔ گرفتار شدہ ملی ٹنٹ کی شناخت کھدرمو پلوامہ کے وسیم بٹ عرف شانف کے بطور ہویی ۔ جوکہ گُذشتہ دو ماہ سے علاقے میں سرگرم تھا۔ دہشت گرد کے دو قریبی ساتھیوں کو بھی فورسز نے دھر دبوچ لیا۔ جن کی شناخت سانبورہ کے عرفان احمد اور سیتھر پلوامہ کے سمیر احمد شیخ کے بطور ہویی ہے۔ ان کے قبضے سے دو گرنیڈ برآمد ہوے ہیں ۔ گرفتار شدہدہشت گردوں اور اُس کے دو قریبی ساتھیوں سے پوچھ تاجھ جاری ہے ۔ اس دوران پلوامہ میں موبائیل اٹرنیٹ خدمات معطل رہی ۔

Published by: sana Naeem
First published: Sep 05, 2020 05:02 PM IST