ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

ٹنگمرگ میں نقب زنوں نے 3 مسجد میں چوری کرکے نقدی رقم اوردیگر قیمتی ساز و سامان پرکیا ہاتھ صاف

  • Share this:
ٹنگمرگ میں نقب زنوں نے 3 مسجد میں چوری کرکے نقدی رقم اوردیگر قیمتی ساز و سامان پرکیا ہاتھ صاف

شمالی کشمیرکےٹنگمرگ میں چورسرگرم ہوگئے ہیں۔ یہاں چوروں نےتین مساجدمیں نقب لگاکروہاں سے عطیہ کےتین صندوقوں کوتوڑکرنقدی رقم اُڑالی جبکہ مساجد سےدیگرقیمتی سامان بھی چرالیاگیاہے۔ یہ واقعہ رات کے دوران پیش آیاچوروں نےرات کی اندھیری کافائدہ اٹھاکران مساجد میں ہاتھ صاف کردیا۔ ایک ساتھ تین مساجد میں نقب زنی پرمقامی لوگوں میں سخت تشویش کی لہردوڑگئی ہے۔ مقامی لوگوں نےاس واقعے پر سخت غم وغصے کااظہارکرتے ہوئےپولیس کے اعلیٰ ذمہ داروں پر نقب زنوں کوگرفتارکرانےکی اپیل کی۔


انہوں نےنیوز18اردوکوبتایاکہ پولیس کوترجیح بنیادوں پران چوروں کوپکڑنےکی مہم تیزکرنی چاہیے۔نقب زنوں نےجامع مسجد وارپورہ ،مسجد شریف گوئی وارہ ٹنگمرگ اورزیارت نقش بانڈی پورہ،میں دوران شب نقب لگاکروہاں سےعطیہ کےصندوقوں کوتوڑکرنقدی رقم اوردیگرسامان چرالیاہے۔مقامی لوگوں اوراوقاف کمیٹی نےچوری کی ان وارداتوں پر سخت تشویش کااظہارکرتےہوئےکہاہے کہ اس طرح سے اگرچورخانہ خدا میں بھی چوری کریں گےتووہ عام لوگوں کےگھروں کوکیادیکھیں گے ۔


لوگوں نے اس سلسلے میں پولیس کے اعلیٰ افسران سے اپیل کی ہے کہ وہ ان نقب زنی کی وارداتوں میں ملوث چوروں کے گروہ کو بے نقاب کرکے انہیں سلاخوں کے پیچھے دھکیل دے۔مشتاق الحسن نامی اوقاف ممبرنےنیوز18اردوکوبتایاکہ مساجد میں چوری کی وارداتیں پیش آنا عوام کےلیے لمحہ فکریہ ہےاب جبکہ خدا کاگھرمحفوظ نہیں توعام لوگوں کےگھروں کاکیاحال ہوگا۔ادھرمقامی لوگوں کے مطابق جولوگ منشیات کی جانب لگے ہوئے ہیں علاقوں میں وہی چوری کےواردات انجام دیتے ہیں۔ ناصرنامی ایک مقامی نے نیوز18اردوکوبتایاکہ جب ان چرسی اورمنشیات کےلت میں ڈوبےہوئے لوگوں کوجب نشہ کرنےکے لیے رقم نہیں ہوتی ہےتویہ ایسےواردات انجام دیتےہیں۔ایسے لوگوں کوسخت لگام کسنے کی ضرورت ہے۔

Published by: Sana Naeem
First published: Jan 21, 2021 07:45 AM IST