உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    کتے کی دم پر پٹاخوں کی لڑی پھوڑنے والوں کے خلاف کاروائی ہوگی : جموں وکشمیر پولیس سربراہ

    فائل فوٹو

    فائل فوٹو

    سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو وائرل ہوئی ہے جس میں کشمیری بولنے والے نوجوانوں کے ایک گروپ کو وادی میں کہیں کھلی جگہ پر بیٹھے ایک کتے کی دم پر پٹاخوں کو لڑی باندھتے اور اس کو آگ لگاتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:
      سری نگر جموں وکشمیر پولیس کے سربراہ ڈاکٹر شیش پال وید نے کہا ہے کہ وادی میں نامعلوم جگہ پر کتے کی دم پر پٹاخوں کی لڑی پھوڑنے والے افراد کے خلاف کاروائی کی جائے گی۔ انہوں نے اپنے ایک ٹویٹ میں کہا ’جموں وکشمیر پولیس ملوثین اور جگہ کی شناخت کرے گی۔ ملوثین کے خلاف انسداد اذیت مویشی قانون کے تحت کاروائی کی جائے گی‘۔
      بتادیں کہ سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو وائرل ہوئی ہے جس میں کشمیری بولنے والے نوجوانوں کے ایک گروپ کو وادی میں کہیں کھلی جگہ پر بیٹھے ایک کتے کی دم پر پٹاخوں کو لڑی باندھتے اور اس کو آگ لگاتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے۔ کشمیر میں بیشتر سوشل میڈیا صارفین نے اسے احمقانہ اور بیوقوفانہ حرکت قرار دیا ہے۔ انہوں نے ریاستی پولیس سے اس بیوقوفانہ حرکت کے مرتکبین کے خلاف سخت کاروائی کا مطالبہ کیا ہے۔
      نیشنل کانفرنس لیڈر اور عمر عبداللہ کے سیاسی صلاح کار تنویر صادق نے اپنے ایک ٹویٹ میں کہا ’انتہائی بیوقوفانہ رویہ۔ کیا جموں وکشمیر پولیس اور پولیس سربراہ ایس پی وید برائے مہربانی فوری کاروائی کرسکتے ہیں۔ کتے پٹاخوں کے شور سے تھرا اٹھتے ہیں۔ ان بیوقوفوں کو سبق سکھانے کی ضرورت ہے‘۔ پولیس سربراہ ایس پی اوید نے تنویر صادق کے ٹویٹ کو ری ٹویٹ کرتے ہوئے ملوثین کے خلاف کاروائی عمل میں لانے کا اعلان کیا۔
      مقتول کشمیری صحافی سید شجاعت بخاری کے فرزند تمہید شجاعت بخاری نے اپنے ٹویٹ میں لکھا ’بے زبان جانوروں کے خلاف انتہائی غیر انسانی سلوک۔ سماج کے ذمہ داری شہری ہونے کی حیثیت سے ہمیں اس حرکت کی مذمت کرنی چاہیے‘۔
      First published: