உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جموں۔کشمیر: سابق وزیراعلی فاروق عبد اللہ بولے، یہ ملک کبھی پاکستان کا نہیں ہوگا

    جموں وکشمیر کے سابق وزیراعلیٰ فاروق عبداللہ: فائل فوٹو

    جموں وکشمیر کے سابق وزیراعلیٰ فاروق عبداللہ: فائل فوٹو

    فاروق عبداللہ نے کہا " " ہمارے یہاں بھی آوازیں آتی ہیں، کوئی کہتا ہے آزادی، کوئی کہتا ہے ہمیں پاکستان جانا ہے۔ ارے کون سا پاکستان جاؤگے'؟

    • Share this:
      جموں۔کشمیر کے سابق وزیراعلی فاروق عبداللہ نے پاکستان کے مسئلے پر بیان دیا ہے۔ انہوں نے کہا " ہمارے یہاں بھی آوازیں آتی ہیں، کوئی کہتا ہے  آزادی، کوئی کہتا ہے ہمیں پاکستان جانا ہے۔ ارے کون سا پاکستان جاؤگے'؟
      فاروق عبداللہ نے کہا ' یہ ملک کبھی پاکستان کا نہیں ہوگا، یہ جموں۔کشمیر '۔ انہوں نے کہا 'جامع مسجد کے اسٹیج پر میں نے کہا کہ ہم پاک نہیں جا سکتے، سرپھرے ہیں ، ان کو عقل آجائے گی'۔


      اس سے پہلے فاروق عبداللہ نے مذہب کے بارے میں بھی بیان دیا تھا۔ انہوں نے کہا تھا 'لوگوں کو ایسا ملک بنانے کی کوشش کرنی چاہئے جہاں سب مذاہب کا یکساں احترام ہو، کوئی ایک مذہب دوسرے سے بڑا نہیں ہے'۔
      First published: