ہوم » نیوز » شمالی ہندوستان

جموں۔کشمیر کے گورنر ستیہ پال ملک بولے: حریت کو مجھے باہری شخص نہیں سمجھنا چاہئے

گورنر ستیہ پال ملک نے صاف کردیا کہ حریت لیڈران سے بات چیت کوئی سیاسی چرچا نہیں تھی۔

  • Share this:
جموں۔کشمیر کے گورنر ستیہ پال ملک بولے: حریت کو مجھے باہری شخص نہیں سمجھنا چاہئے
جموں وکشمیر کے گورنرستیہ پال ملک: فائل فوٹو

جموں۔کشمیر کے گورنر ستیہ پال ملک نے بدھ کو کہا کہ حریت کو مجھے باہری شخص نہیں سمجھنا چاہئے۔ نیوز ایجنسی اے این آئی سے بات چیت کرتے ہوئے ستیہ پال ملک نے کہا کہ حریت کو عام لوگوں پر ہو رہے مظالم سے متعلق کسی بھی معاملے پر سیدھی بات کرنی چاہئے۔ اگر وہ اس سے گزر رہے ہوں تو۔ انہوں نے کہا " میں عام آدمی کیلئے ہمیشہ مہیہ ہوں، میں حریت کیلئے بھی مہیہ ہوں۔ اگر عام لوگوں پر کوئی ظلم ہو رہا ہے تو میں انہیں انصاف دلانے کیلئے ہر ممکن کوشش کروں گا۔  میں حریت کے سینئر لیڈران کا احترام کرتا ہوں اور جیسے میں عام آدمی سے  ملتا ہوں ویسے ہی حریت لیڈران سے ملتا ہوں'۔


گورنر ستیہ پال ملک نے صاف کردیا کہ حریت لیڈران سے بات چیت کوئی سیاسی چرچا نہیں تھی۔ انہوں نے کہا کہ حریت سے بات چیت کوئی سیاسی بنیاد پر نہیں تھی۔ بطور گورنر میرے پاس سیاسی میٹنگ کرنے کا حق نہیں ہے۔ یہ حق صرف مرکزی حکومت کے پاس ہے۔


پی ڈی پی ۔ بی جے پی اتحاد ٹوٹنے کے بعد جموں۔کشمیر کی وزیر اعلی محبوبہ مفتی نے گزشتہ سال جون میں اپنے عہدے سے استعفی دے دیا تھا۔ بی جے پی اور پی ڈی پی نے 2015 میں اتحاد کی حکومت بنائی تھی۔ کئی مسئلے پر دونوں  کے درمیان نظریاتی اختلافات تھے۔


اسمبلی انتخابات میں بی جے پی کو 25 سیٹیں ملی تھیں جبکہ پی ڈی پی کے پاس 28 سیٹیں تھیں۔ گزشتہ 10 سال میں چوتھی مرتبہ جب ریاست میں گورنر راج لگا ہے۔
First published: Jan 16, 2019 08:15 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading